”ایک دن پہلے پتہ چلا کہ میں کھیل رہا ہوں تو ساری رات نیند ویسے ہی نہیں آئی اورپھر صبح 6 بجے ہوٹل کا فائر الارم بج اٹھا جس پر۔۔۔“ وہاب ریاض نے ماضی کے پنوں سے یادگار واقعہ سنا دیا

”ایک دن پہلے پتہ چلا کہ میں کھیل رہا ہوں تو ساری رات نیند ویسے ہی نہیں آئی ...
”ایک دن پہلے پتہ چلا کہ میں کھیل رہا ہوں تو ساری رات نیند ویسے ہی نہیں آئی اورپھر صبح 6 بجے ہوٹل کا فائر الارم بج اٹھا جس پر۔۔۔“ وہاب ریاض نے ماضی کے پنوں سے یادگار واقعہ سنا دیا

  

لاہور (ڈیلی پاکستان آن لائن) پاکستان کرکٹ ٹیم کے مایہ ناز فاسٹ باﺅلر وہاب ریاض نے ٹیسٹ ڈیبیو کو یاد کرتے ہوئے ایک دلچسپ واقعہ سنایا ہے جنہوں نے اپنے پہلے ہی میچ میں 5 وکٹیں حاصل کی تھیں۔

تفصیلات کے مطابق وہاب ریاض نے انٹرنیشنل ٹیسٹ کیرئیر کا آغاز انگلینڈ کیخلاف کیا تھا جنہوں نے پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) کی جانب سے جاری ایک ویڈیو میں بتایا کہ ”مجھے ایک دن پہلے ٹیم میٹنگ میں بتایا گیا تھا کہ تم کل میچ کھیل رہے ہوں، اور یہ سن کر ساری رات نیند نہیں آئی، بدقسمتی سے صبح چھ بجے ہوٹل کا فائر الارم بجنا شروع ہو گیا اور ہم ہوٹل کے باہر کھڑے تھے، ساری رات ویسے ہی نیند نہیں آ رہی تھی اور سوچ رہا تھا کہ اتنی وکٹیں لوں گا، یہ کر دوں گا، وہ کر دوں گا۔“

وہاب ریاض نے کہا کہ ”جب میچ کھیلنے کیلئے میدان میں گیا تو دباﺅ تھا، پہلا اوور کرایا تو تیسری گیند پر ہی چوکا پڑ گیا اور پھر چھٹی گیند پر بھی چوکا پڑ گیا، جس کے بعد کپتان میرے پاس آیا اور کہا کہ گھبرانا نہیں ہے، اس کے بعد میں نے اپنی کوشش جاری رکھی اور اللہ تعالیٰ نے مجھے محنت کا صلہ 5 وکٹوں کی صورت میں دیا۔ اس وقت انگلینڈ کی ٹیسٹ ٹیم دنیا کی بہترین ٹیم تھی، اور کیرئیر کے پہلے ہی ٹیسٹ میچ میں ردھم مل جائے اور وکٹیں بھی حاصل ہوں تو اس سے زیادہ آپ کیا مانگ سکتے ہیں۔“

مزید :

کھیل -