شہباز شریف سے سوال پوچھیں تو غصے میں آجاتے ہیں،شہزاداکبر

 شہباز شریف سے سوال پوچھیں تو غصے میں آجاتے ہیں،شہزاداکبر

  

اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک)مشیر داخلہ شہزاد اکبر نے کہا ہے کہ قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر شہبازشریف کو ہراساں کرنے والی بات درست نہیں۔ ان پرسوال پوچھا جائے تو غصے میں آ جاتے ہیں، کچھ لوگوں نے پارٹی فنڈز دیئے وہ شوگرمل کے اکاؤنٹ میں کیسے آگئے، یہ سوالات تو بنتے ہیں۔نجی ٹی وی سے گفتگو کرتے ہوئے شہزاد اکبرکہا کہ ایف آئی اے دفاترمیں ویڈیوریکارڈنگ کی سہولت دیں گے، ویڈیوریکارڈنگ ہوگی توسب کچھ واضح ہوجائے گا۔اپنی بات کو جاری رکھتے ہوئے انہوں نے کہا کہ جوسوالات پوچھے گئے ان کا براہ راست شہبازشریف سے بھی تعلق تھا، لیگی صدر کو اپنا جواب دینا چاہیے، ایف آئی اے تین دفعہ سوالوں کا جواب پوچھ رہا ہے۔ ایف آئی اے میں ان کا آج تیسرا انٹرویوتھا، ایف آئی اے کا مقصد سوالوں کے جواب لینا ہے، ٹرانزیکشن سے متعلق سوالات کیے گئے، سابق وزیراعلیٰ پنجاب نے سوالوں کے جواب نہیں دیئے۔شہزاد اکبر نے کہا کہ شہبازشریف کوکافی پیش کی گئی۔ تفتیش کے دوران انہیں سرکہہ کرمخاطب کیا گیا۔ لیگی صدر ہوں یا کوئی اورعزت کے ساتھ بات کی جاتی ہے۔ 

شہزاداکبر

مزید :

صفحہ اول -