ایکس کیڈر کورٹس کیلئے نامزدگیوں کو 10دن میں منظور کیا جائے وگرنہ مسترد تصور کی جائینگی: لاہور ہائیکورٹ 

ایکس کیڈر کورٹس کیلئے نامزدگیوں کو 10دن میں منظور کیا جائے وگرنہ مسترد تصور ...

  

لاہور(نامہ نگارخصوصی)چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ مسٹر جسٹس محمد امیر بھٹی نے صوبائی حکومت کوہدایت کی ہے کہ پنجاب کی ایکس کیڈر کورٹس کیلئے لاہور ہائی کورٹ کی جانب سے بھیجی گئی نامزدگیوں کو آئندہ 10دن میں منظور کیا جائے وگرنہ یہ نامزدگیاں مسترد تصور کی جائیں گی،یہ ہدایات چیف جسٹس لاہور ہائی کورٹ مسٹر جسٹس محمد امیر بھٹی نے صوبائی انتظامیہ کے اعلیٰ افسروں سے ملاقات کے دوران جاری کیں،اس موقع پرسینئر ترین جج مسٹر جسٹس ملک شہزاد احمد بھی موجود تھے،ملاقات میں پنجاب کی ایکس کیڈر کورٹس میں ججوں کی خالی اسامیوں کا معاملہ زیر بحث آیا، فاضل جج نے مزید کہا کہ صوبائی حکومت کی جانب سے متذکرہ نامزدگیوں کو سنجیدہ نہیں لیا جارہا، اگر یہ سلسلہ جاری رہا تو آئندہ لاہور ہائی کورٹ کی جانب سے صوبے کی ایکس کیڈر کورٹس کیلئے نامزدگیاں نہیں بھیجی جائیں گی،چیف جسٹس نے مزید ہدایت کی کہ آئندہ ایک اسامی کے تقرر کے لئے صرف ایک ہی نامزدگی کی جائے گی جس کی منظوری 10ایام کے اندر دی جائے،چیف جسٹس نے ایکس کیڈر کورٹس میں ججز کی تعیناتی نہ ہونے پر تشویش کا اظہار کرتے ہوئے مزیدکہا کہ ججوں کی عدم دستیابی سے زیرِ التواء مقدمات کی تعداد میں مسلسل اضافہ ہورہا ہے جہاں ہزاروں کی تعداد میں مقد مات زیر سما عت ہیں، مقدمات کی سماعت نہ ہونے کی وجہ سے وکلاء اور سائلین کو شدید مشکلات کا بھی سامنا ہے، صوبائی حکومت عوامی مشکلات کا ادراک کرتے ہوئے ججز کی تعیناتیوں کے لئے فوری اقدامات کرے تاکہ جلد اور معیاری انصاف کی فراہمی کو یقینی بنایا جاسکے،واضح رہے کہ پنجاب کی 7 عدالتیں طو یل عرصے سے خالی ہیں، ان عدالتوں کے ججز کی تقرری کے لئے لاہور ہائی کورٹ نے 20 مئی سے 5 جون کے دوران نامزدگی کے مراسلا جات روانہ کئے تھے جبکہ اس موقع پر رجسٹرار لاہور ہائیکورٹ عرفان احمد سعید، ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج ہیومن ریسورس (ڈسٹرکٹ جوڈیشری) چودھری عبدالرشید عابد اور پرنسپل سٹاف آفیسر ٹو چیف جسٹس محمد یار ولانہ بھی موجود تھے،چیف سیکرٹری پنجاب جواد رفیق ملک بھی اجلاس میں شریک ہوئے۔

 ایکس کیڈر کورٹس 

مزید :

صفحہ آخر -