مہمند،ہیڈکوارٹر غلنئی ہسپتال عالمی یوم آبادی بھر پور انداز میں منایا گیا 

مہمند،ہیڈکوارٹر غلنئی ہسپتال عالمی یوم آبادی بھر پور انداز میں منایا گیا 

  

ضلع مہمند(نمائندہ پاکستان)ہیڈکوارٹر غلنئی ہسپتال عالمی یوم آبادی بھر پور انداز میں منایا گیا ہے۔بڑھتی ہوئی آبادی کے باعث صحت کی سہولیات میسر نہیں۔پروگرام کے مہمان خصوصی ڈاکٹر شبیر ڈی ایم ایس ہیڈکوارٹر ہسپتال غلنئی تھے۔ڈسٹرکٹ پاپولیشن ویلفیئر آفیسر غفور شاہ مہمند اور سنٹر انچارج فرزانہ سیف کا پروگرام سے اظہار خیال۔تفصیلات کے مطابق ہیڈکوارٹر ہسپتال غلنئی میں عالمی یوم آبادی کے حوالے سے پروگرام کا انعقاد کیا گیا ہے۔جس میں محکمہ سوشل ویلفیئر کے امجد علی اور ریسکیو 1122 میڈیا کوارڈنیٹر عبداللہ مہمند سمیت علاقے کے علماء کرام، عمائدین علاقہ اور ویمن ویلفیئر ورکرز نے کثیر تعداد میں شرکت کی۔اس موقع پر ڈسٹرکٹ پاپولیشن ویلفیئر آفیسر غفور شاہ نے اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ بے شک رزق اللہ تعالیٰ دیتے ہیں۔مگر بچوں کی صحت، تعلیم اور تربیت والدین پر فرض ہے۔اس لئے اپنے بچوں کے لئے صحیح راستے کا انتخاب کر لینا چاہئے۔اور ان کے مستقبل کے لئے کوئی اچھی سی پلاننگ کرنا ہے۔ ان باتوں کا مقصد یہ ہے کہ کچھ چیزیں اللہ تعالیٰ نے تقدیر میں لکھے ہیں۔ مگر کچھ کام ہمارے ذمہ چھوڑ دیا ہے۔ اس حوالے سے یہ عالمی یوم آبادی ہم لوگ منا رہے ہیں۔ کہ ماں اور بچے کے صحت کا خاص خیال رکھیں۔مولانا عبدالحق کا کہنا تھا کہ اسلام میں ماں اور بچے کے حوالے سے واضح احادیث موجود ہیں۔دو سال یا دو سال سے زیادہ وقفہ ماں اور بچے کے صحت کے لئے لازمی قرار دی گئی ہے۔پروگرام کے مہمان خصوصی ڈاکٹر شبیر اور فرزانہ سیف نے کہا کہ آبادی کا کنٹرول انتہائی ناگزیر ہوگیا ہے۔کیونکہ بے تحاشہ بڑھتی ہوئی آبادی کے باعث آج سب لوگوں کو دیگر سہولیات خاص کر صحت کی سہولیات میسر نہیں۔ اب صورتحال یہ ہے کہ کورونا کے دوران ہسپتالوں میں مریضوں کے لئے جگہ کم پڑ گئے۔ تقریب میں علاقے کے مشران ملک خائستہ خان، ملک جان ولی، عبدالرحمن، عزت خان اور قاری نورولی شاہ ودیگر بھی موجود تھے۔ تقریب کے اختتام پر ہیڈکوارٹر ہسپتال غلنئی میں عالمی یوم آبادی کے حوالے سے واک بھی کیا گیا۔  

مزید :

پشاورصفحہ آخر -