ملتان: کرونا ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ کے بغیر مویشی منڈی میں داخلہ بند 

ملتان: کرونا ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ کے بغیر مویشی منڈی میں داخلہ بند 

  

ملتان، وہاڑی، چوک اعظم، بہاولپور، کوٹ ادو، ٹھٹھہ صادق آباد (سپیشل رپورٹر، وقائع نگار، بیورو رپورٹ، ڈسٹرکٹ رپورٹر، نامہ نگار، تحصیل رپورٹر)نشتر ہسپتال ملتان میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا میں (بقیہ نمبر46صفحہ6پر)

 مبتلا کوئی مریض جاں بحق نہیں ہوا, اموات کی مجموعی تعداد 853 ہوگئی۔ تفصیل کے مطابق نشتر ہسپتال کے آئی سو لیشن وارڈز میں گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران کورونا کے باعث کوئی مریض جاں بحق نہیں ہوا یوں یکم اپریل 2020 سے 10جولائی 2021 کے درمیان کورونا کے باعث ہونے والی اموات کی مجموعی تعداد 853ہے،جبکہ نشتر ہسپتال میں زیر علاج کورونا کہ مریضوں کی تعداد 14ہو گئی ہے جن میں سے 11 مریضوں کا تعلق ملتان سے ہے جبکہ زیر علاج 05 مریضوں کی حالت تشویشناک ہے،جبکہ کورونا کے شبہ میں 13مریض زیر علاج ہیں جن کی رپورٹس کا انتظار ہے،ادھر رواں سال نشتر ہسپتال میں کورونا کے شبہ میں 6ہزار 813 افراد رپورٹ ہوئے جن میں سے 2 ہزار 703 افراد میں کورونا کی تصدیق ہوئی ہے،ادھر مختص وینٹی لیٹرز کی تعداد میں کمی کر دی گئی ہے اب مختص 32 وینٹی لیٹرز میں سے 20 خالی ہیں جبکہ کورونا آئی سو لیشن بلاک میں بستروں کی تعداد بھی 112 کر دی گئی ہے۔ وہاڑی جمنیزیم میں قائم کئے گئے کورونا ویکسی نیشن سنٹر میں سہولیات کا فقدان  کورونا ویکسی نیشن سنٹر پر سہولیات کا فقدان پایا جارہا ہے شہریوں غفار،شاہد،شاہزیب،محمود،قاسم،عمران،شعبان و دیگر نے صحافیوں کو بتایا کہ سنٹر پر ویکسین لگوانے آئے خواتین اور مرد حضرات کیلئے نہ تو ہوا کیلئے پنکھوں کا انتظام ہے اور نہ ہی پینے کیلئے پانی دستیاب ہے اس کے برعکس سنٹر عملہ و ڈاکٹرز خود اے سی کے سامنے بیٹھ کر ویکسی نیشن کررہے ہیں جس پر شہریوں نے احتجاج کرتے ہوئے وزیراعلی پنجاب،کمشنر ملتان،ڈپٹی کمشنر وہاڑی سمیت دیگر حکام سے نوٹس لینے کا مطالبہ کیا ہے۔ چیف ایگزیکٹو آفیسر ڈاکٹر انجم اقبال نے اچانک جمنیزیم میں قائم کورونا ویکسی نیشن سنٹر کا دورہ کیا دورہ کے دوران انہوں نے سٹاف حاضری ریکارڈ سمیت ویکسی نیشن عمل کا جائزہ لیا اس موقع پر ویکسی نیشن سنٹر پر عملہ کی حاضری انتہائی کم پائی گئی جس پر انہوں نے غیر حاضر سٹاف کے خلاف محکمانہ کاروائی کا حکم دیا جبکہ سٹاف اور ڈاکٹرز کو اپنی کارکردگی مزید بہتر بنانے کی ہدایت کی۔ اسسٹنٹ کمشنر تحصیل چوبارہ سلیمان احمدلون نے کہاکہ گزشتہ24گھنٹوں میں ضلع لیہ میں طے کردہ ٹارگٹ سے زیادہ 2653افراد کی ویکسی نیشن کرکے 108فی صدریکنگ کا حصول ممکن بنایاگیاہے جس سے ضلع لیہ پنجاب بھرمیں پہلی پوزیشن پر آگیاہے۔انہوں نے یہ بات کورونا ویکسی نیشن کے جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے کہی۔اس موقع پر ڈپٹی ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر طاہرافتخار چودھری بھی موجود تھے۔اسسٹنٹ کمشنر تحصیل چوبارہ سلیمان احمدلون نے کہاہے کہ کورونا ویکسی نیشن کے سوسے زائدفیصدہدف حاصل کرنا خوش آئندامرہے جسے برقرار رکھاجائے انہوں نے مزیدکہاکہ مہم کو کامیابی سے ہمکنار کرنا صرف محکمہ صحت اور دیگر اداروں کی ہی نہیں بلکہ معاشرے کے ہرباشعورشہری کی ذمہ داری ہے وطن عزیز سے کورونا کیس خاتمہ کے لیے ہم سب کو اپنی اپنی ذمہ داریاں ادا کرنی ہوں گی۔انہوں نے کہاکہ کورونا ایس اوپیز پر عمل کرکے ہی ہم کورونا سے محفوظ رہ سکتے ہیں۔اس موقع پر ڈپٹی ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر طاہرافتخار چودھری نے بتایاکہ نادرا اور احساس مرکز میں 2 نئی ٹیمیں تفویض کی جائیں گی۔ ڈپٹی کمشنر عرفان علی کاٹھیا نے کہا ہے کہ کورونا وائرس سے محفوظ رہنے کے لئے کورونا ایس او پیز پر عملدرآمد کو یقینی بنایا جائے اور 18سال اور اس سے زائد عمر کے افراد کی کورونا ویکسینیشن کی جائے۔ وہ دفتر کے کمیٹی روم میں منعقدہ اجلاس سے خطاب کر رہے تھے۔ اس موقع پر ایڈیشنل ڈپٹی کمشنر ہیڈ کوارٹر عامر نذیر کھچی، ضلع کے اسسٹنٹ کمشنر، سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر محمد اقبال مکوال، سی ای او ایجوکیشن ظہور احمد چوہان اور دیگر متعلقہ محکموں کے افسران موجود تھے۔ڈپٹی کمشنر نے کہا کہ کورونا کی چوتھی لہر کے خدشہ کے پیش نظر کورونا ویکسینیشن لازمی کرائی جائے۔ انہوں نے سرکاری افسران و ملازمین کو خصوصی ہدایت کی ہے کہ وہ خود بھی کورونا ویکسین لگوائیں اور اپنے اردگرد کے افراد کو ویکسینیشن کے لئے قائم کریں کیونکہ یہ ہماری قومی ذمہ داری ہے کہ اس موذی وبا سے محفوظ رہنے کے لئے تمام تر ایس او پیز پر عملدرآمد کیا جائے اور ویکسینیشن کے عمل کو پہلی ترجیح بنائی جائے۔سی ای او ہیلتھ ڈاکٹر محمد اقبال مکوال نے بتایا کہ یونین کونسل سطح پر ٹیمیں مامور کی گئی ہیں جو لوگوں کو کورونا ویکسین لگائیں گی۔ اسی طرح ضلع کی تحصیلوں میں موبائل ہیلتھ ٹیمیں فعال ہیں۔ تحصیل ہیڈ کوارٹر ہسپتال کے فوکل پرسن ڈاکٹر مہر کامران اکبر نے کہا ہے کہ جن لوگوں کی سائنوفارم ویکسین کی پہلی ڈوز کو لگوائے 21 دن ہو گئے ہیں اور انہیں دوسری ڈوز کا میسیج نہیں آیا اور سائینوویک کی پہلی ڈوز کو لگوائے ہوئے 28 دن ہو گئے ہیں اور دوسری ڈوز کا میسیج نہیں آیا وہ کسی میسج کا انتظار کیے بغیر قریبی ویکسین سنٹر سے اپنی رہ جانے والی دوسری ڈوز لگوا سکتے ہیں،انہوں نے کہا کہ کووڈ ویکسین کی پہلی ڈوز 18 سال سے اوپر کے تمام مردو خواتین جنہوں نے ابھی ویکسین کی پہلی ڈوز نہیں لگوائی وہ کرونا کی ممکنہ چوتھی لہر میں کرونا کی کسی پیچیدگی سے بچنے کے لیے جلد از جلد ویکسین لگوائیں اور کسی قسم کی  افواہوں پر یقین نہ کریں۔ حکومت پنجاب اور ڈپٹی کمشنر خانیوال آغا ظہیر عباس شیرازی کی ہدایت پر کورونا ویکسین کے حوالے سے اسسٹنٹ کمشنر آفس جہانیاں میں انجمن تاجران،ہوٹل ایسوسی ایشن اور فلور ملز ایسوسی ایشن کے نمائندوں نے شرکت کی جبکہ خصوصی شرکت ڈپٹی ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر ڈاکٹر محمد زوہیب صادق نے کی. اجلاس کی صدارت اسسٹنٹ کمشنر جہانیاں محمد بابر سلیمان نے کی. اسسٹنٹ کمشنر نے کورونا ویکسین  کی موجودہ صورتحال کے بارے میں دریافت کیا تو ڈپٹی ڈسٹرکٹ ہیلتھ آفیسر نے بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ محکمہ صحت کی ٹیمیں دیگر محکموں اور علاقہ معززین کے تعاون سے کورونا ویکسین کیمپ کا اہتمام کیا جا رہا ہے مگر محنت کش طبقہ مختلف شاپس، فیکٹریوں اور فلور ملز میں کام کر رہے ہیں ان حالات میں ٹارگٹ حاصل کرنے میں دشواری پیش آ رہی ہے. جس پر اسسٹنٹ کمشنر محمد بابر سلیمان نے کہا کہ کورونا کی چوتھی لہر پھیلنے کا خدشہ ہے کورونا کی بھارتی قسم ڈیلٹا کو ماہرین نے انتہائی خطرناک قرار دیتے ہوئے کہا کہ کورونا ویکسین نہ لگائی گئی تو نتائج برے ہو سکتے ہیں این سی او سی کی جانب سے جاری کردہ اعلامیہ میں کورونا ایس او پیز پر عمل درآمد تیز کرنے پر زور دیتے ہوئے کہا کہ 31 اگست 2021 تک کورونا ویکسین کا ٹارگٹ سو فیصد مکمل کریں۔  کورونا وباء کی چوتھی لہر کے خدشہ کے پیش نظر ڈپٹی کمشنر علی شہزاد نے سخت ہدایات جاری کر دیں ہیں اور کورونا ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ کے بغیر مویشی منڈی میں داخلہ بند کردیا گیا ہے۔کورونا ویکسی نیشن سرٹیفکیٹ نہ رکھنے والے بیوپاری اور خریدار مویشی منڈی میں داخل نہیں ہو سکیں گے۔اسی طرح کورونا ویکسی نیشن نہ کرانے والے اراضی ریکارڈ سنٹر اور نادرا آفس میں بھی داخل نہیں ہو سکیں گے اور انہیں شادی ہالز میں داخلے اور ریسٹورنٹ میں انڈور ڈائننگ کی اجازت بھی نہیں ہو گی۔ ضلع کے تمام پرائس مجسٹریٹس کو ان ہدایات پر سختی سے عملدرآمد کرانے کا حکم دے دیا گیا ہے۔نئی ہدایات جان لیوا انڈین وائرس کی پاکستان میں موجودگی کے شواہد سامنے آنے کے پیش نظر جاری کی گئیں ہیں۔ ڈپٹی کمشنر نے دیہی اور شہری عوام سے فوری طور پر کورونا ویکسی نیشن کرانے کی اپیل کی ہے تاکہ کورونا وباء کی چوتھی لہر سے بچا جا سکے۔

کرونا وائس 

مزید :

ملتان صفحہ آخر -