میپکو اہلکاروں کا بچے پر تشدد‘ والد کا انصاف حصول کیلئے عدالت سے رجوع 

میپکو اہلکاروں کا بچے پر تشدد‘ والد کا انصاف حصول کیلئے عدالت سے رجوع 

  IOS Dailypakistan app Android Dailypakistan app

رحیم یار خان (بیورو رپورٹ)واپڈا اہلکاروں نے بچے کا کان(بقیہ نمبر33صفحہ7پر)

 مروڑ کر تھپڑ اور سوٹیوں سے تشدد کا نشانہ بناڈالا انصاف کے حصول کیلئے والد عدالت پہنچ گیا۔ تفصیل کے مطابق موضع شیہہ والا سوئی گیس چوک کے رہائشی جام سمیع اللہ کھوکھر نے میڈیا کو بتایا کہ گزشتہ سے پیوشتہ روز سب ڈویژن جمالدین والی کے واپڈا اہلکاروں نے میرے بچے یعقوب سمیع کا کان مروڑ کر تھپڑ اور سوٹیوں سے تشدد کا نشانہ بنایا۔ جام سمیع اللہ نے واپڈا ٹیم پر الزام عائد کیا کہ ہماری ٹربائن شمسی توانائی پر ہے واپڈا اہلکاروں نے میرے بچے سے کہا کہ ٹربائن کا بل لے آ تو بچے نے جواب دیا کہ ٹربائن کا بل نہیں آتا وہ شمسی توانائی پر چلتی ہے تاہم واپڈا ٹیم کے اہلکار طیش میں آگئے جن میں لائن سپریڈنٹ قیصر اعوان لائن مین شہزاد اور راشد جبکہ ڈرائیور زاہد بھی ان کے ہمراہ موجود تھا۔ انہوں نے میرے بچے کا کان مروڑ کر تھپڑ اور سوٹیوں سے تشدد کا نشانہ بنایا جس پر میرا بچہ روتے ہوئے گھر آگیا جس وہ اپنے بیٹے کے ہمراہ انصاف کے حصول کیلئے فاضل عدالت رجوع کر لیا ہے۔ جام سمیع اللہ کھوکھر نے بتایا کہ ہم رحیم یار خان سب ڈویژن کے صارفین ہیں واپڈا ٹیم کا تعلق جمالدین والی سب ڈویژن سے ہے ان کی حدود ہی نہیں بنتی تو میرے بیٹے کو بلا جواز تشدد کا نشانہ بنایا گیا۔ انہوں نے فاضل عدالت میں دعوی دائر کیا ہے اور امید ہے کہ فاضل عدالت سے انصاف فراہم کیا جائے گا۔