فٹ بال ورلڈ کپ کی افتتاحی کک معذور نوجوان لگائے گا

فٹ بال ورلڈ کپ کی افتتاحی کک معذور نوجوان لگائے گا

  

ساو¿ پاو¿لو( نیٹ نیوز)فٹبال ورلڈ کپ کی افتتاحی کک روبوٹ سوٹ میں ملبوس معذور نوجوان لگائے گا، برازیلین ڈاکٹر میگوئل نیکولس اپنی حیرت انگیز ایجاد کی نمائش دنیا کے سب سے بڑے اسٹیج پر کرنے والے ہیں۔معذور نوجوان وہیل چیئر سے اٹھ کر کک لگائے گا، اس کے تمام مصنوعی اعضا دماغ کے سگنلز پرکام کریں گے۔ تفصیلات کے مطابق فیفا ورلڈ کپ کی افتتاحی تقریب جمعرات کو ساﺅپاﺅلو میں ہوگی جس میں 65 ہزار تماشائی موجود ہوں گے، ان کے سامنے میگا ایونٹ کی پہلی کک کوئی نامور فٹبالر کے بجائے ایک جسمانی طور پر مضبوط نوجوان لگائے گا، پروگرام کے تحت وہ وہیل چیئر پر ہوں گے۔

 تاہم انھوں نے روبوٹ جیسا لباس زیب تن کررکھا ہوگا، اچانک وہ گول پوسٹ کے قریب وہیل چیئر پر سے اٹھ کھڑے ہوں گے اور گیند کو کک لگائیں گے، وہ یہ سب کچھ اپنے دماغ سے جاری ہونے والے سگنلز کی مدد سے کریں گے جبکہ ان کے مصنوعی اعضا پر لگی مصنوعی جلد کے ذریعے فوراً ان کویہ علم جائیگا گیند پر ٹانگ نے اپنا کام مکمل کرلیا ہے۔یہ مختلف روبوٹک سوٹ برازیلین ڈاکٹر میگوئل نیکولس نے دنیا بھر سے تعلق رکھنے والے 156 سائنسدانوں کی مدد سے تیار کیا ہے، اس کی بدولت معذور شخص چل پھر سکتا ہے

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -