د ہشتگردی اور لاقانونیت کی لہر کو آئین و قانون کی حکمرانی کے بغیر روکنا ممکن نہیں،ڈاکٹر امجد

د ہشتگردی اور لاقانونیت کی لہر کو آئین و قانون کی حکمرانی کے بغیر روکنا ممکن ...

لاہور( سپیشل رپورٹر) آل پاکستان مسلم لیگ کے سیکرٹری جنرل ڈاکٹر محمد امجد نے کہا ہے کہ وطن عزیز میں جاری دہشت گردی اور لاقانونیت کی لہر کو آئین و قانون کی حکمرانی کے بغیر روکنا ممکن نہیں ہے۔ جن ممالک میں شخصیات کی بجائے آئین اور قانون کو طاقت حاصل ہے وہاں جمہوری ادارے اور عوام ترقی کی منزلیں طے کرتی ہیں۔ ان خیالات کا اظہار انہوں نے گزشتہ روز کراچی میں ہونے والے دہشت گردی کے واقعہ پر اپنے ردعمل کے دوران کیا۔ ڈاکٹر محمد امجد نے کہا کہ قومی المیہ ہے کہ انتخابات کے بل بوتے پر اقتدار میں آنے والے سیاستدانوں نے جمہوری ایوانوں میں قبضہ جمانے کے بعد قانون اور آئین کو اپنے محلات کے دربان بناکر شخصیات پرستی کی جس کے نتیجہ میں پاکستان آج بارود کا ڈھیر بنا ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ زرداری اینڈ نواز کمپنی نے اپنے اپنے دور اقتدار میں معاشی ترقی اور عوامی خوشحالی کے بلند و بانگ دعوے تو کئے مگر درپردہ اپنی من پسند شخصیات کو نوازتے رہے جس کے باعث قومی اور جمہوری ادارے کمزور سے کمزور تر ہوتے گئے۔ انہوں نے کہا کہ سید پرویز مشرف کا سابقہ دور حکومت ہر لحاظ سے زرداری اینڈ نواز کمپنی سے بہتر تھا کیونکہ اس دور میں وسائل کی فراوانی تھی اور عوام کیلئے مسائل نہ ہونے کے برابر تھے۔ سید پرویز مشرف نے آئین و قانون کی بالادستی کو ہر لحظہ ملحوظ خاطر رکھا یہی وجہ ہے کہ انہیں عوام نے بھرپور پذیرائی بخشی۔ انہوں نے کہا کہ مجھے یقین ہے کہ اگر پاکستان میں قانون اور آئین کو بالادست قرار دیدیا جائے تو یہی پاکستان جو تنزلی کا شکار ہے کامیابیوں اور کامرانیوں کی منزلیں طے کرتا ہوا دکھائی دے گا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1