مذاکرات نہیں ہو رہے

مذاکرات نہیں ہو رہے
مذاکرات نہیں ہو رہے
کیپشن: pic

  

                  اسلام آباد (آئی این پی) جمعیت علماءاسلام (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمن نے کہا ہے کہ طالبان سے کوئی مذاکرات نہیں ہورہے‘ مذاکرات کا راگ الاپنے والے قوم کو بتائیں مذاکرات کہاں ہورہے ہیں‘ کون کررہا ہے اور کس سے ہورہے ہیں‘ اسٹیبلشمنٹ مذاکرات کیلئے تیار نہیں ہے‘ کامیابی کی مبارکباد دینے والے بتائیں کیا دہشت گرد کراچی ایئرپورٹ پر قبضہ کرنے آئے تھے؟ دہشت گرد ایئرپورٹ پر حملہ کرکے کامیابی سے اپنے پیغام دے گئے ہیں‘ قوم جانتی ہے سکیورٹی کی ناکامی کے کون ذمہ دار ہیں؟ ماضی میں حساس مقامات پر ہونے والے حملوں سے کوئی سبق نہیں سیکھا گیا۔ وہ منگل کو پارلیمنٹ ہاﺅس کے باہر صحافیوں سے گفتگو کررہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ طالبان کے خلاف آپریشن تسلسل کے ساتھ جاری ہے‘ طالبان سے کسی قسم کے کوئی مذاکرات نہیں ہورہے حکومت بتائے کس سے کہاں اور کس نے مذاکرات کئے ہیں؟ انہوں نے کہا کہ اسٹیبلشمنٹ مذاکراتی عمل میں رکاوٹ ہے جب تک اسٹیبلشمنٹ مذاکرات کیلئے راضی نہیں ہوگی تب تک مذاکرات کے ذریعے امن قائم نہیں ہوسکتا۔ انہوں نے کہا کہ تحریک طالبان سے مذاکرات کے نام پر عوام کو اندھیرے میں رکھا جارہا ہے میڈیا عوام کو حقیقت سے اس حوالے سے آگاہ کرے اور مذاکرات کی ساری کہانی سنائے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ کراچی ایئرپورٹ پر آپریشن کی کامیابی کی مبارکباد دینے والے بتائیں کیا دہشت گرد ایئرپورٹ پر قبضہ کرنے آئے تھے؟ انہوں نے کہا کہ دہشت گر ایئرپورٹ پر حملہ کرکے اپنے مقاصد حاصل کرنے میں کامیاب ہوگئے ہیں

مزید :

صفحہ اول -