سمارٹ فون کے بعد سمارٹ انگوٹھی بھی آ گئی

سمارٹ فون کے بعد سمارٹ انگوٹھی بھی آ گئی
سمارٹ فون کے بعد سمارٹ انگوٹھی بھی آ گئی

  

شکاگو (نیوز ڈیسک) اگرچہ آج کل انگوٹھی پہننے کا رواج کچھ کم ہوگیا ہے لیکن اب ایک ایسی سائنسی انگوٹھی ایجاد ہوگئی ہے کہ جسے ہر کوئی پہننا چاہے گا کیونکہ اس میں جڑا خوبصورت موتی یا قیمتی پتھر صرف دلکشی کا ہی باعث نہیں بلکہ یہ وائبریٹ کرکے یا روشنی جلا کر آپ کو یہ بھی بتائے گا کہ کس کا فون یا میسج آیا ہے۔ رنگلی نامی یہ انگوٹھی دیکھنے میں تو ایک عام انگوٹھی کی طرح ہی نظر آئے گی لیکن اصل میں یہ ایک جدید الیکٹرانک آلے کسی طرح کام کرے گی۔ یہ انگوٹھی بلیوٹوتھ ٹیکنالوجی کے ذریعے آپ کے موبائل فون سے رابطے میں رہے گی اور جیسے ہی کسی کا فون یا میسج آئے گا تو یہ وائبریٹ کرے گی یا مخصوص روشنی دکھائے گی جس سے آپ کو معلوم ہوسکے گا کہ کسی کی کال یا میسج آرہا ہے اور آپ فون کو جیب سے نکالے بغیر ہی یہ معلومات حاصل کرسکیں گے۔ یہ انگوٹھی آپ کے فیس بک، انسٹاگرام، وائن اور سنیپ چیٹ سے آنے والے پیغامات کی بھی اطلاع دے گی اور آپ مختلف لوگوں کے فون یا میسج کیلئے اپنی پسند کے مطابق رنگ اور وائبریشن کا انتخاب بھی کرسکیں گے۔ اس انگوٹھی کی موجد کرسٹینا کا کہنا ہے کہ اُس کا فون پرس میں ہونے کی وجہ سے وہ اکثر دوستوں اور گھر والوں کے میسج نہیں دیکھ پاتی تھی کیونکہ اسے بار بار فون نکالنا پسند نہیں تھا لیکن اس انگوٹھی کی وجہ سے یہ مسئلہ ختم ہوگیا ہے کیونکہ پرس سے فون نکالے بغیر ہی اُسے معلوم ہوجاتا ہے کہ آنے والی کال یا میسج کتنی ضروری ہے اور فون نکالنے کی ضرورت ہے یا نہیں۔

مزید : سائنس اور ٹیکنالوجی