جیو پر ملک دشمنی کا الزام غلط ہوا تو میں استعفیٰ دے دوں گا ،وزیر دفاع خواجہ آصف

جیو پر ملک دشمنی کا الزام غلط ہوا تو میں استعفیٰ دے دوں گا ،وزیر دفاع خواجہ ...
جیو پر ملک دشمنی کا الزام غلط ہوا تو میں استعفیٰ دے دوں گا ،وزیر دفاع خواجہ آصف
کیپشن: khawaja asif

  

لاہو ر(مانیٹرنگ ڈیسک)وفاقی وزیر دفاع خواجہ آصف نے کہا ہے کہ جیو پر ملک دشمنی کا الزام سوچ سمجھ کر اور درست لگایا اگر الزام غلط ہوا تو اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دوں گا ۔خواجہ آصف کہتے ہیں کہ پیمرا کو جیو کے خلاف ملک دشمنی کی درخواست وزیر اعظم کی مرضی سے دی ، وزیر اعظم نوازشریف نے جیو کیخلاف درخواست کی منظوری دی تھی ، انہوں نے کہا کہ اس چینل کے خلاف ملک دشمنی کی درخواست پر قائم ہوں ، جیو کے خلاف ملک دشمنی کے ثبوت میں نے خود دیکھے ہیں ۔وزیر دفاع خواجہ آصف نے اے آر وائی کے پروگرام ”آف دی ریکارڈ “میں گفتگو کرتے ہوئے چیلنج کیا کہ اگر جیو کے خلاف ملک دشمنی کا الزام غلط ہوا تو میں استعفیٰ دے دوں گا،انہوں نے کہا کہ پیمرا کو وزارت اطلاعات و نشریات کے ماتحت نہیں ہونا چاہئے، پاکستان الیکڑونک میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی خود مختار ادارہ ہے ۔ خواجہ آصف نے کہا کہ مذاکرات کا آپشن حکومت نے سنجیدگی سے لیا تھا لیکن اس کا کوئی نتیجہ نہیں نکلا ، میری رائے کے مطابق طالبان سے مذاکرات کرنے سے ریاست کمزور ہوئی ،اب حکومت کو فوری اورسخت کارروائی کرنے چاہے۔انہوں نے مزید کہا کہ2006میں کی جانے والی اپنی تقریر پر آج بھی قائم ہوں ، میری یا کسی اور وجہ سے فوج اور حکومت کے درمیان تناو نہیں ہے ۔ میری عمر کی وجہ سے مجھے فوج میں عزت دی جاتی ہے ۔

مزید :

لاہور -اہم خبریں -