معصوم لڑکی نے غلطی سے خود کشی کر لی

معصوم لڑکی نے غلطی سے خود کشی کر لی
معصوم لڑکی نے غلطی سے خود کشی کر لی

  

برمنگھم (نیوز ڈیسک) برطانیہ کی ایک 13 سالہ لڑکی کے بارے میں یہ افسوس ناک انکشاف سامنے آیا ہے کہ وہ سیڑھیوں پر کھیلتے ہوئے ریلنگ پر پھسل رہی تھی کہ اس کے اپنے ہی گلے میں لپٹا ہوا ربن جنگلے میں پھنس کو اس کے گلے کا پھندا بن گیا اور بیچاری لڑکی سیڑھیوں کے ساتھ لٹک کر موت کے منہ میں جا پہنچی۔ تیرہ سالہ دونیا اس ھادثے سے کچھ پہلے ہی اپنی ماں کے ساتھ خریداری کرکے واپس آئی تھی اور اس کی ماں کا کہنا ہے کہ وہ بہت خوش و خرم تھی اور اُچھل کود کررہی تھی۔ اس کے گلے میں نیلے رنگ کا ایک لمبا ربن لپٹا ہوا تھا اور وہ سیڑھیوں کی ریلنگ کے ساتھ ساتھ پھسل کر لطف اندوز ہورہی تھی کہ اس دوران اس کا ربن سیڑھیوں کے جنگلے میں پھنس گیا اور وہ پھسل کر سیڑھیوں کے ساتھ لٹک گئی۔ وہ اپ نی تمام تر کوشش کے باوجود اپنی گردن کو ربن کی گرفت سے آزاد نہ کرواسکی اور بالآخر یہ ربن ہی اُس کی موت کا پھندہ بن گیا۔ دونیا کی ماں اور بھائی نے فوراً ربن کاٹ کر اسے نیچے اتارا اور ایمبولینس منگوائی لیکن ڈاکٹروں نے بتایا کہ اس کی موت واقع ہوچکی تھی۔ مقامی حکام کی تحقیقات نے خودکشی کے امکان کو رد کرتے ہوئے دونیا کی موت کے حادثاتی ہونے کی تصدیق کردی ہے۔

مزید : جرم و انصاف