حق مہر کا دعویٰ،سابق گورنر غلام مصطفی کھر کی عدالت طلبی

حق مہر کا دعویٰ،سابق گورنر غلام مصطفی کھر کی عدالت طلبی

لاہور(نامہ نگار)ایڈیشنل سیشن جج انجم رضا سید نے حق مہر کے دعوے میں نیلوفر کی درخواست پر سابق گورنرپنجاب غلام مصطفی کھرکو ذاتی طور پر 23جون کو طلب کرلیاہے۔عدالت میں سابق گورنرپنجاب غلام مصطفی کھرکی سابقہ بیوی ہونے کی دعویدارخاتون نیلوفرنے سول جج کے دعوے کے خلافاپیل دائر کررکھی ہے ،عدالت میں نیلو فر کی طرفسے درخواست دی گئی کہ غلام مصطفی کھر کو ان کے کیس میں ذاتی طور پر طلب کرکے ان کا بیان لیا جائے اس پر عدالت نے مصطفی کھر کے وکیل شاہد کو ہدایت کی کہ وہ اپنے موکل کو 23جون کو عدالت میں پیش کریں، نیلوفر کی جانب سے دائردعوے میں موقف اختیار کیا گیا ہے کہ غلام مصطفی کھر نے جب شادی کی تھی انہوں نے حق مہر میں اسے جوہرٹاؤن کی کوٹھی لکھ کر دی تھی اسے یہ کوٹھی دلوائی جائے، عدالت میں غلام مصطفی کھر کا موقف یہ ہے کہ نیلوفراس کی بیوی نہیں

وہ اس کو نہیں جانتا

اس پر سول جج نے غلام مصطفی کھر کے حق میں ڈگری جاری کی تھی تاہم مذکورہ فیصلہ کے خلاف درخواست گزارنیلوفر نے اپیل دائر کررکھی ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 4