رواں سال کی پہلی ششماہی میں 4770منافع خور وں کو گرفتار کیا گیا

رواں سال کی پہلی ششماہی میں 4770منافع خور وں کو گرفتار کیا گیا

لاہور ( جنرل رپورٹر) کمشنر لاہور ڈویژن عبداﷲ خان سنبل کی ہدایات کے تحت عام مارکیٹوں میں اشیائے ضروریہ کی قیمتوں کو اعتدال میں اور حکومتی نرخوں کے مطابق رکھنے کے لیے رواں سال کی پہلی ششماہی میں لاہور ڈویژن میں 4770 منافع خوروں کو گرفتار کیا گیا اور (25,726,339) تقریبا ڈھائی کروڑ روپے جرمانہ کیا گیا۔ ضلع لاہور، ضلع ننکانہ صاحب، ضلع قصور اور ضلع شیخوپورہ میں پرائس مجسٹریٹوں نے 34,906 مارکیٹ کے دوروں کے دوران 1,87,280 پوائنٹس کو چیک کیا۔ 2807 افراد کے خلاف مقدمات کا اندراج ہوا۔ اشیائے ضروریہ کی قیمتوں اور کوالٹی کو جانچنے کے ساتھ ساتھ لاہور ڈویژن میں ذخیرہ اندوزوں اور ملاوٹ مافیا کے خلاف بھی ایکشن لیا گیا۔ ترجمان کمشنر لاہور ڈویژن کے مطابق گھی و آئل کی قیمتوں میں کمی کے حوالے سے چیکنگ کے دوران 106 افراد کے خلاف ایف آئی آرز جبکہ 511 افراد کو گرفتار کیا گیا اور 2,873,200 روپے جرمانہ عائد کیا گیا۔ چاروں ضلعی حکومتوں کے پرائس مجسٹریٹوں نے 50593 پوائنٹس کو چیک کیا۔ ترجمان کے مطابق کمشنر لاہور ڈویژن نے رمضان المبارک میں رمضان بازاروں کے علاوہ عام مارکیٹوں میں بھی اشیائے خوردونوش و گھی و آئل کے حوالے سے ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت کے طے کردہ نرخوں پر اشیائے خوردونوش کی فروخت کا ہر ایک کو پابند بنایا جائے اور اس بارے میں کوئی سمجھوتہ نہیں ہوگا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1