زمین سے دل نہ بھر ا،اب انسانوں نے خلاء میں شرمناک حرکات کافیصلہ کر لیا

زمین سے دل نہ بھر ا،اب انسانوں نے خلاء میں شرمناک حرکات کافیصلہ کر لیا
زمین سے دل نہ بھر ا،اب انسانوں نے خلاء میں شرمناک حرکات کافیصلہ کر لیا

  

نیو یارک (نیوز ڈیسک) فحش فلموں کی سب سے بڑی ویب سائٹ کا شرمناک اعزاز حاصل کرنے والی امریکی کمپنی نے اب اپنے حیا سوز کاروبار کو خلا میں لے جانے کا اعلان کر دیا ہے۔

مزیدپڑھیں:کنوارہ پن عذاب بن گیا،جاپانی مرد صف مخالف کو ترسنے لگے

امریکی فلم ساز کمپنی کا کہنا ہے کہ خلاءمیں اس کی پہلی فحش فلم سال 2016 کے آخر میں فلمائی جائے گی اور اس مقصد کے لئے خلاءمیں بھیجنے کے لئے اداکاروں، اداکاراﺅں کے انتخاب اور سفر کے اخراجات کے لئے فنڈ جمع کرنے کا عمل شروع کر دیا گیا ہے۔ کمپنی نے انٹرنیٹ پر کراﺅڈ فنڈنگ ویب سائٹ Indiegogo کے زریعے فنڈ جمع کرنا شروع کر دئیے ہیں جن کا ابتدائی ہدف 34 لاکھ ڈالر (تقریباً 34 کروڑ پاکستانی روپے) رکھا گیا ہے۔

کمپنی کے نائب صدر کورے پرائس کا کہنا ہے کہ وہ فحش فلموں کے کاروبار کو نئی بلندیوں تک لے جانا چاہتے ہیں اور خلاءمیں کشش ثقل سے آزاد ماحول میں فلم بنا کی تاریخ رقم کرنا چاہتے ہیں۔ ان کا یہ بھی کہنا ہے کہ یہ کوشش خلاءمیں جنسی فعل سے متعلق حقائق کو جاننے اور سمجھنے کے لئے ایک اہم سائنسی تجربے کا کام بھی دے گی۔پراجیکٹ کے کل اخراجات کا 60 فیصد صرف خلائی سفر پر خرچ ہو گا۔

مزید : ڈیلی بائیٹس