روزے کا تقدس پامال ، ماروی سرمد اور حافظ حمداللہ میں نجی ٹی وی کے پروگرام میں شدید لڑائی ، فریقین کی جانب سے ایک دوسرے پر خوب تبرا بھیجا گیا

روزے کا تقدس پامال ، ماروی سرمد اور حافظ حمداللہ میں نجی ٹی وی کے پروگرام میں ...
روزے کا تقدس پامال ، ماروی سرمد اور حافظ حمداللہ میں نجی ٹی وی کے پروگرام میں شدید لڑائی ، فریقین کی جانب سے ایک دوسرے پر خوب تبرا بھیجا گیا

  


اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک) سماجی کارکن ماروی سرمد اور جمعیت علما اسلام کے رہنما حافظ حمداللہ کے درمیان نجی ٹی وی کے پروگرام میں شدید تلخ کلامی ہوئی جبکہ دونوں ہی طرف سے رمضان المبارک کے تقدس کو پامال کرتے ہوئے انتہائی غیر اخلاقی گفتگو کی گئی جس پر معاملہ مقدمے تک جا پہنچا ہے۔

یہ افسوسناک واقعہ نجی ٹی وی نیوز ون کے پروگرام میں پیش آیا جہاں خواتین کو زندہ جلائے جانے کے حوالے سے گفتگو ہورہی تھی اور وہاں سے بات تو تکرار سے ہوتی ہوئی انتہائی قسم کی تلخ کلامی میں تبدیل ہوگئی ۔ پروگرام کے دوران ماہر قانون بیرسٹر مسرور نے حقوق نسواں بل پیش کرنے پر اسلامی نظریاتی کونسل کے چیئرمین مولانا محمد خان شیرانی کے بارے میں کہا کہ انہوں نے چرس پی ہوئی ہے ۔ جس پر حافظ حمداللہ طیش میں آگئے اور اسے انتہائی غیر مہذب گفتگو قرار دیا۔

سعودی عرب میں سیکڑوں لوگ دہشتگردی کے الزام میں گرفتار ،کتنے پاکستان شامل ہیں؟ جان کر آپ کو بھی افسوس ہوگا

بات یہیں ختم ہوجاتی تو ٹھیک تھا لیکن جب ماروی سرمد اپنی باری پر بولیں تو انہوں نے اپنی گفتگو کا آغاز ہی بیرسٹر مسرور کی تائید سے کیا جس پر حافظ حمداللہ اشتعال میں آگئے اور انہوں نے ماروی سرمد کو ٹوک دیا اور کہا کہ میں آپ کو بات نہیں کرنے دوں گا ۔فریقین میں پروگرام کے دوران شدید تلخ کلامی ہوئی ۔ اینکر نادیہ مرزا نے حافظ حمد اللہ کو فیاض الحسن چوہان کے ساتھ نشست تبدیل کرنے کی درخواست کی تاہم حافظ حمداللہ پروگرام چھوڑ کر چلے گئے ۔

’آج کے بعد صرف لال رنگ کے کپڑے پہنوں گی‘ داعش کی قید سے رہائی پانے والی خاتون کے  اعلان پر حیرت بھی ہوگی اور افسوس بھی ‎‎

بعد ازاں ماروی سرمد نے سوشل میڈیا پر لکھا کہ ” آج مجھے نیوز ون کے پروگرام میں انتہائی تلخ تجربہ ہوا جب بیرسٹر مسرور نے ایک بات کی جس پر جے یو آئی کے رہنما حافظ حمداللہ ناراض ہوگئے۔ میں نے اپنی بات ان الفاظ کے ساتھ شروع کی کہ میں مسرور صاحب سے مکمل اتفاق کرتی ہوں اور عین اسی وقت حمداللہ نے مجھے ٹوک دیا اور ناراض سے ناراض تر ہوتے چلے گئے ۔ میں بھی ترکی بہ ترکی جواب دیا اور یہی وہ موقع تھا جب انہوں نے مجھے گالیاں دینی شروع کردیں۔ حافظ حمداللہ نے مجھے طوائف قرار دیا اور کہا میں تمہاری اور تمہاری ماں کی بھی شلوار اتاردوں گا۔ میں نے جواب میں اس کے خاندان کی خواتین کے بارے میں وہی الفاظ دہرائے اور اسی وقت اس نے مجھے مارنے کی بھی کوشش کی اور یہ سب کیمرا میں بھی ریکارڈ ہوگیا ۔ پروگرام میں شریک فیاض الحسن چوہان نے اسے پکڑ لیا جس کی وجہ سے اس کے ہاتھ مجھ تک نہیں پہنچ پائے جبکہ انہیں نیوز ون کی سکیورٹی دور کھینچ کر لے گئی۔ جب اس مذہب فروش شخص نے یہ سب کیا تب اس نے روزہ رکھا ہوا تھا۔“

میرے حاملہ ہونے کی خبریں ایسے پھیلائی جا رہی ہیں جیسے میں 5بچوں کی ماں ہوں :کرینہ کپور

علاوہ ازیں ماروی سرمد نے جمعیت علماءاسلام کے رہنما حافظ حمد اللہ کیخلاف بدتمیزی کرنے پر اسلام آباد کے تھانہ کوہسار میں مقدمہ درج کروانے کیلئے درخواست دائرکر دی ہے۔پولیس کا کہناہے کہ ماروی سرمد کی درخواست موصول ہو گئی ہے اور ان کی درخواست پر قانون کے مطابق عمل کیا جائے گا۔

مزید : لاہور