ملک کی بقاء اور سلامتی کیلئے بڑے فیصلے کرنے ہوں گے،میاں سلیم

ملک کی بقاء اور سلامتی کیلئے بڑے فیصلے کرنے ہوں گے،میاں سلیم

لاہور (سٹی رپورٹر) انجمن تاجران لاہور کے جوائنٹ سیکرٹری میاں سلیم نے کہاہے کہ اب وقت آگیا ہے کہ ملک کی بقاء اور سلامتی اور ملکی ترقی کیلئے بڑے فیصلے کئے جائیں ۔کیونکہ ہمارے دشمن ملک بھارت نے تمام دریاؤں سے پانی روکنے کی آخری حدیں پار کر دی ہیں اور سندھ طاس معاہدے کے مطابق جو پانی ہمارا حق تھا اس پر ڈاکہ مارا جا رہا ہے جس کا موقع کسی غیر نے نہیں ہمارے اپنے ملک کے ضمیر فروش سیاستدانوں اور سابقہ تمام حکومتوں نے دیا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ ملک میں پانی کی ذخائر اس وقت انتہائی ڈیڈ لیول پر آنے کی وجہ سے فوری طور پر ڈیم کی ضرورت ہے ورنہ آنے والے وقت میں ہماری نسلیں پانی کی ایک ایک بوند کو ترس جائیں گی،اس کیلئے فوری طور پر کالا باغ ڈیم ہی واحد ڈیم ہے جو 4 سے 5 سال کی انتہائی قلیل مدت میں مکمل ہو کر پروڈکشن دے سکتا ہے انہوں نے کہاکہ سابق چےئرمین واپڈا نے جو زہر سپریم کورٹ میں اُگلا ہے اس میں ایک فیصد بھی حقیقت نہیں ہے۔

ضمیر فروش سیاستدانوں اور اس جیسے سرکاری افسروں کی ملک دشمنی کی وجہ سے ملک میں کوئی نیا ڈیم نہیں بن سکا جس کا خمیازہ آج 22 کروڑ عوام برداشت کر رہے ہیں انہوں نے کہاکہ دیا میر بھاشا ڈیم بھی وقت کی ضرورت ہے لیکن اس کی تکمیل 10سے 12 سال میں ہوگی اور جبکہ ملک کو ریسکیو سروسز کی ضرورت ہے جوج فوری طور پر کالا باغ ڈیم ہی دے سکتا ہے انہوں نے کہاکہ تاجر برادری ملک کا محب وطن طبقہ ہے ملک میں جب بھی کسی بھی قسم کی ناگہانی صورتحال پیدا ہوئی تاجر برادری نے جانی و مالی قرنانیوں سے دریغ نہیں کیا ۔

مزید : میٹروپولیٹن 4