کاہنہ تھانے کے قریب دکان میں دھماکہ، کانسٹیبل اور راہگیر خاتون سمیت 3زخمی

کاہنہ تھانے کے قریب دکان میں دھماکہ، کانسٹیبل اور راہگیر خاتون سمیت 3زخمی

لاہور،کاہنہ(خبرنگار،نامہ نگار) کاہنہ پولیس سٹیشن کے متصل پرانی فروٹ منڈی میں ایک دکان میں دھماکہ ہوا جس سے ایک کانسٹیبل اور ایک راہگیر خاتون سمیت 3 افراد زخمی ہو گئے۔ تھانے کی دیوار گر گئی عمارت کے کمروں کے شیشے اور کھڑکیاں ٹوٹ گئیں، دھماکہ سے دکان کی دیوار میں شگاف پڑ گیا، واقعہ کے بعد بھگدڑ مچ گئی۔ علاقہ میں خوف وہراس پھیل گیا ، دھماکہ کے بعد اٹھنے والا دھواں دور تک دکھائی دیا۔حساس اداروں کی ٹیموں سمیت پولیس حکام موقع پر پہنچ گئے۔ حساس اداروں نے ایک دکان کے مالک کو حراست میں لے کر نامعلوم مقام پر منتقل کر دیا ہے۔ سکیورٹی اداروں نے علاقہ کو مکمل گھیرے میں لے لیا اور ارد گرد کے گھروں کو خالی کرا کرمکمل سرچ آپریشن کیا گیا تفتیشی ٹیموں نے جائے وقوعہ سے ایک شخص کومشکوک سمجھ کر حراست میں لے لیا ہے جو کہ دکان کا مالک بتایا جاتا ہے ۔ ذرائع کا کہنا ہے کہ حراست میں لئے جانے والے شخص کا نام نذر حسین بتایا گیا ہے ،نامہ نگار کے مطابق اس کانام ظفر ہے جس کو تحویل میں لے کر تفتیش شروع کردی ہے۔ ابتدائی تحقیقات کے دوران یہ بات سامنے نہیں آ سکی کہ دھماکہ بارودی مواد کا تھا یا گیس سلنڈر کا تھا۔ ڈی آئی جی آپریشنز لاہور ڈاکٹر معین مسعود کا کہنا ہے کہ فرانزک رپورٹ کے بعد اصل صورتحال سامنے آ سکے گی دھماکے کی نوعیت کا اندازہ لگانے کے لئے بم ڈسپوزل سکواڈ اور فرانزک ٹیمیں کئی گھنٹے تک شواہد اکٹھی کرتی رہیں۔پولیس نے واقعہ کا مقدمہ درج کر لیا ہے۔واقعہ کی تحقیقات سی ٹی ڈی اور پولیس انویسٹی گیشن ٹیموں نے شروع کر دی ہے۔ سی سی پی او لاہور کیپٹن (ر) محمد امین وینس کا کہنا ہے کہ دھماکے کے دوران تھانے کی متصل دیوار گری ہے جبکہ تھانے کے کمروں کے شیشے اور کھڑکیاں ٹوٹ گئی ہیں تھانے کے ایک کمرے میں سویا ہوا کانسٹیبل تحسین معمولی زخمی ہوا ہے جسے مقامی ہسپتال میں داخل کروا دیا گیا ہے۔تحقیقات مکمل ہونے کے بعد دھماکہ کی اصل صورتحال سامنے آ سکے گی۔

مزید : علاقائی