خاغذات نامزدگی کا آج آخری دن،پنجاب اسمبلی کی نشستوں پر 235امیدوارون کے کاغذات جمع

خاغذات نامزدگی کا آج آخری دن،پنجاب اسمبلی کی نشستوں پر 235امیدوارون کے کاغذات ...

اسلام آباد، لاہور ( نیوز ایجنسیاں،مانیٹرنگ ڈیسک) الیکشن کمیشن کے مطابق کاغذات نامزدگی جمع کرانے کا آج آخری دن، الیکشن کمیشن عام انتخابات کا ضابطہ اخلاق جاری نہ کرسکا،پنجاب اسمبلی کی نشستوں پر 235 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرا دیے۔تفصیلات کے مطابق الیکشن کمیشن کے مطابق کاغذات نامزدگی جمع کرانے کا آج آخری دن ہے خواتین اور اقلیتوں کی مخصوص نشستوں کیلئے کاغذات نامزدگی بھی (آج) پیر تک جمع کرائے جاسکتے ہیں۔الیکشن کمیشن، ضلعی ریٹرننگ افسروں اور ریٹرننگ افسروں کے دفاتر اتوار کے روز بھی کھلے ر ہے جس کا مقصد امیدواروں کو کاغذات نامزدگی جمع کرانے کے لئے سہولت فراہم کرنا ہے۔دوسری جانب ملکی تاریخ میں پہلی بارانتخابی شیڈول جاری ہونے کے 10 روز تک عام انتخابات2018 ء کیلئے الیکشن کمیشن کی بڑی ناکامی سامنے آگئی الیکشن کمیشن عام انتخابات کا ضابطہ اخلاق جاری نہ کرسکا۔ ضابطہ اخلاق جاری نہ ہونے سے ڈسٹرکٹ ریٹرننگ افسران،ریٹرننگ افسران پریشان ہیں۔ ریٹرننگ افسران کاکہناہے کہ امیدواروں کی کئی غلطیوں پر ضابطہ اخلاق نہ ہونے کی وجہ سے کارروائی نہیں کرسکتے۔ضابطہ اخلاق جاری نہ ہونے کی وجہ سے الیکشن کمیشن کا مانیٹرنگ ونگ بھی غیر فعال ہے۔دوسری طرف اگلے عام انتخابات کیلئے کاغذات نامزدگی جمع کرانے کا آج( پیر کو) آخری دن ہے۔علاوہ ازیں عام انتخابات 2018 کے لیے پنجاب اسمبلی کی نشستوں پر 235 امیدواروں نے کاغذات نامزدگی جمع کرا دیے، آج نامزدگی فارم جمع کرانے والوں میں مسلم لیگ (ن) کے رہنما چوہدری نثار نے مجموعی طور پر 3 نشستوں پر کاغذات نامزدگی جمع کرائے۔چوہدری نثار نے قومی اسمبلی کی نشست این اے 59 اور صوبائی اسمبلی کی 2 نشستوں پی پی 10 اور 12 کے لیے کاغذات نامزدگی جمع کرائے، ان کی جانب سے شیخ اسلم اور شیخ ساجد نے نامزدگی فارم جمع کرائے۔ مریم نواز نے این اے 127 سے کاغذات نامزدگی جمع کرائے جب کہ مسلم لیگ (ن) کے اختر حسین بادشاہ، غزالی سلیم بٹ، چوہدری اختر اور فیصل ایوب کھوکھر بھی کاغذات نامزدگی جمع کرانے والوں میں شامل ہیں۔ مسلم لیگ ق کے چودھری پرویز الہی نے این اے 69 گجرات سے کاغذات نامزدگی جمع کرائے جب کہ مونس الہی نے گجرات کے حلقہ پی پی 30 سے کاغذات نامزدگی کرائے۔تحریک انصاف کے رہنما علیم خان نے این اے 129 سے کاغذات نامزدگی اپنے وکیل کے ذریعے جمع کرائے جب کہ جاوید علی نے پی پی 167 اور 161 سے، مراد راس نے پی پی 159 اور ولید اقبال نے پی پی 158 اور 157، 163 سے جمع کرائے۔جماعت اسلامی کے سابق ایم پی اے وسیم اختر نے این اے 170 بہاولپور کیلئے کاغذات نامزدگی جمع کرا دیے۔ایم کیو ایم پاکستان کے رہنما کنور نوید جمیل نے این اے 255 کراچی وسطی سے جب کہ پیپلز پارٹی کے رہنما قادر خان مندوخیل نے این اے 249 سے کاغذات نامزدگی جمع کرائے۔ایم کیو ایم پاکستان کے ارشاد علی نے پی ایس 127، اے پی ایم ایل کے نسیم خان نے بھی پی ایس 127 سے کاغذات نامزدگی جمع کرائے۔پیپلز پارٹی کے رکن رانا محمد عقیل نے پی ایس 124، وسیم اختر نے پی ایس 117 ویسٹ اور جاوید ناگوری نے پی ایس 107 سے کاغذات نامزدگی جمع کرا دیے۔چیئرمین سندھ ترقی پسند پارٹی قادر مگسی نے این اے 213 نوابشاہ سے کاغذات نامزدگی جمع کرائے جب کہ مسلم لیگ (ن) کے صوبائی صدر شاہ محد شاہ نے این اے 223 مٹیاری کے حلقے کے لیے کاغذات نامزدگی جمع کرائے۔این اے 230 بدین گولارچی سے پیپلز پارٹی کے حاجی رسول بخش چانڈیو کی جانب سے کاغذات نامزدگی جمع کرائے گئے ہیں۔ترجمان الیکشن کمیشن کا کہنا ہے کہ بلوچستان بھر میں قومی اسمبلی کے 16 حلقوں کے لئے 94 اور صوبائی اسمبلی کی 51 نشستوں کے لئے 385 کاغذات نامزدگی جمع کرائیں گے۔

آخری دن

ہی لیں گے۔

مزید : کراچی صفحہ اول