حاضری سے استثنی کی کوئی درخواست سپریم کورٹ لےکرنہیں گیا :سابق وزیراعظم نواز شریف

حاضری سے استثنی کی کوئی درخواست سپریم کورٹ لےکرنہیں گیا :سابق وزیراعظم نواز ...
حاضری سے استثنی کی کوئی درخواست سپریم کورٹ لےکرنہیں گیا :سابق وزیراعظم نواز شریف

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق وزیراعظم نواز شریف کا کہنا ہے کہ میں حاضری سے استثنی کی کوئی درخواست سپریم کورٹ میں لےکرنہیں گیا ، احتساب عدالت میں درخواست دی تھی وہ مستردہوگئی۔

احتساب عدالت میں پیشی پر آئے نواز شریف سے صحافی نے سوال کیا کہ آپ کوسپریم کورٹ نے لندن جانےکی اجازت دی ہے؟جس پر ان کا کہنا تھا کہ میں نے توسپریم کورٹ کوکوئی درخواست ہی نہیں دی، احتساب عدالت درخواست دی تھی وہ مستردہوگئی۔نواز شریف کی صحافیو ں سے غیر رسمی گفتگو میں ایک صحافی نے سوال کیا کہ مشرف کہتے ہیں تمام مقدمات میں ضمانت دی جائے پھرواپس آو¿ں گا؟جس کے جواب میں نواز شریف کا کہنا تھا کہ مشرف کے بارے میں کچھ نہیں کہوں گا۔

واضح رہے کہ احتساب عدالت میں حاضری سے استثنی کی درخواست مسترد ہونے پر نواز شریف کہنا تھا کہ مجھے میری بیمار بیوی کی عیادت کے لئے بھی جانے نہیں دیا جا رہاجس پر گزشتہ روز چیف جسٹس میاں محمد ثاقب نثار کا کہنا تھا کہ ہم نے نواز شریف کولند ن جانے سے نہیں روکا وہ جب جانا چاہیں بتاکر جا سکتے ہیں ،وہ ایسی باتیں صرف شہرت کے لئے کرتے ہیں۔

مزید : قومی /سیاست /علاقائی /اسلام آباد