’میں نے اپنی 4سالہ بیٹی کو ذبح کردیا ہے تاکہ رمضان کے دوران۔۔۔‘ ننھی سی بچی کو قتل کرنے والے باپ نے ایسی وجہ بتادی کہ ہر کسی کے ہوش اُڑادئیے

’میں نے اپنی 4سالہ بیٹی کو ذبح کردیا ہے تاکہ رمضان کے دوران۔۔۔‘ ننھی سی بچی ...
’میں نے اپنی 4سالہ بیٹی کو ذبح کردیا ہے تاکہ رمضان کے دوران۔۔۔‘ ننھی سی بچی کو قتل کرنے والے باپ نے ایسی وجہ بتادی کہ ہر کسی کے ہوش اُڑادئیے

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں ایک توہم پرست بدبخت شخص نے مسلمان ہونے کے باوجود رمضان المبارک کے مقدس مہینے میں ایسا ہولناک کام کر ڈالا ہے کہ سن کر ہی آدمی دہل جائے۔ میل آن لائن کے مطابق بھارتی ریاست راجستھان کے شہر جودھ پور کے 26سالہ نواب علی قریشی نامی نوجوان نے گزشتہ رات اپنی 4سالہ بیٹی کو ذبح کر ڈالا اور جب پولیس نے اسے حراست میں لے کر تفتیش کی تو کہنے لگا کہ ”میں رمضان کے مہینے میں اللہ کی راہ میں اپنی سب سے پیاری چیز قربان کرنا چاہتا تھا، چونکہ دنیا میں اپنی بیٹی سے سب سے زیادہ پیار کرتا تھا اس لیے میں نے اسے قربان کر دیا۔“

پولیس کے مطابق ملزم کا کہنا تھا کہ ”اس روز شام کے وقت میں اپنی بیٹی رضوانہ کو بازار لے کر گیا۔ اسے پھل، چاکلیٹ اور دوسری چیزیں لے کر دی اور اسے راستے میں بتایا کہ میں اسے دنیا میں سب سے زیادہ پیار کرتا ہوں، اپنی بیوی سے بھی زیادہ۔ پھر رات کے پچھلے پہر میں اسے اٹھا کر گھر کے صحن میں لے گیا اور کلمہ پڑھ کر اس کے گلے پر چھری چلا دی اور واپس آ کر سو گیا۔“تاہم بعدازاں وہ کہنے لگا کہ مجھ پر شیطان حاوی ہو گیا تھا جس کی وجہ سے مجھ سے یہ جرم سرزد ہو گیا۔ رپورٹ کے مطابق ملزم کے خلاف اس کی بیوی شبانہ کی مدعیت میں قتل کے الزام کے تحت مقدمہ درج کر لیا گیا ہے۔

مزید : ڈیلی بائیٹس /بین الاقوامی /Ramadan Page /Ramadan News