رستم شہر اور مضافاتی علاقوں میں ساتویں روز بھی پیٹرول ناپید

رستم شہر اور مضافاتی علاقوں میں ساتویں روز بھی پیٹرول ناپید

  

رستم(تحصیل رپورٹر) رستم شہر اور مضافاتی علاقوں میں ساتویں روز بھی پیٹرول ناپید، عوام کو شدید مشکلات کا سامنا، عام دکانوں میں 150 روپے فی لیٹر تک فروخت جاری، ضلعی انتطامیہ سے نوٹس لینے کا مطالبہ۔ تفصیلات کے مطابق رستم شہر اور گردونواح میں تمام پیٹرول پمپ مالکان نے پیٹرول دستیاب نہ ہونے پمپس بند کردیا ہے جبکہ ایک دو سرکاری پیٹرول پمپس میں گھنٹوں انتظار کے بعد ایک لیٹر پیٹرول سرکاری نرخ سے کہیں زیادہ نرخ پر کھلے عام فروخت جاری ہے اس کے علاوہ مین بازار میں موجود چھوٹے دکانوں میں ایک لیٹر 120 روپے جبکہ دیہاتی علاقوں کے دکانوں میں 150 روپے تک فروخت جاری ہے عوامی حلقوں کی جانب سے بار بار شکایات کے باوجود انتظامیہ اس سلسلے میں مکمل طور پر خاموش تماشائی کا کردار ادا کررہی ہے دوسری جانب پیٹرول دستیاب نہ ہونے کی وجہ سے چنگ چی ڈرائیورز اور موٹر سائیکل سواروں کو بھی سفر کرنے میں شدید دشواری اور مشکلات کا سامنا ہے پورا پورا دن ایک لیٹر پیٹرول کے حصول کے لئے عوام ترس رہی ہے لاک ڈاون کے ستائے ہوئے لوگ مزید مسائل کا سامنا نہیں کرسکتے اس لئے حکومت اور ضلعی انتظامیہ فی الفور ہنگامی بنیادوں پر پیٹرول کی دستیابی کو یقینی بنا کر سرکاری نرخ پر عوام کو پیٹرول مہیا کریں..

مزید :

پشاورصفحہ آخر -