شانگلہ میں کلاس فور ملازمین کا مطالبات کے حل کیلئے مظاہرہ

  شانگلہ میں کلاس فور ملازمین کا مطالبات کے حل کیلئے مظاہرہ

  

الپوری(ڈسٹرکٹ رپورٹر)شانگلہ کلاس فور ملازمین کا مطالبات کی حق میں احتجاجی مظاہرہ،حکومت مہنگائی کی تناسب سے تنخواہوں میں سو فیصد اضافہ کریں،موجودہ حالات اور بڑھتی ہوئی مہنگائی میں نجی ملازمین مشکلات سے دوچار ہے،تمام اڈھاک ریلیف سمیت ہاوس رینٹ،ملاکنڈ ڈویژن میں چارکول فنڈ بنیادی تنخواہوں میں ضم کیا جائے۔حکومت نجی ملازمین کو نظر انداز کرنے ے بجائے ان کے جائز مطالبات پر سنجیدگی سے پیش رفت کریں۔ ان خیالات کا اظہار بدھ کے روز آل کلاس فور ایسوسی ایشن شانگلہ کے زیر اہتمام الپوری میں احتجاجی مظاہرے سے صدر آفتاب حسین،جنرل سیکرٹری فضل ہادی و دیگر عہدیداروں نے کہی۔ مظاہرین نے پلے کارڈ اٹھا رکھیں تھے جس پر ان کے مطالبات درج تھے۔ مظاہرین کا مطالبہ تھا کہ کنونشن الاونس ڈبل کیا جائے تمام سرکاری ملازمین کو یکساں الاونس دیا جائے اور تنخواہوں میں تضادات ختم کرے۔چار کول ٹھیکداروں کی ظالمانہ سلوک سے ملازمین کو ازاد کرکے یہ فنڈ تنخواہوں میں دی جائے۔ان مظاہرین کا کہنا تھا کہ نجی ملازمین کو نظر انداز کرنا لمحہ فکریہ ہے اور اس سے مزید مسائل جنم لیتے ہیں۔ ان کلاس فور ملازمین نے گزشتہ دو سالوں سمیت رواں سال کے چار کول اور فائر ووڈ کی رقم جلد ادا کرنے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ شانگلہ میں گزشتہ دو سال سے کلاس فور ملازمین فائر ووڈ چار کول سے محروم رہے ہیں۔۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -