نیب کی کارکردگی زیروہے،چیئرمین کوبتائیں ہم کارکردگی سے خوش نہیں،پشاور ہائیکورٹ کے پٹرول اورآٹا بحران کیخلاف درخواست پر ریمارکس

نیب کی کارکردگی زیروہے،چیئرمین کوبتائیں ہم کارکردگی سے خوش نہیں،پشاور ...
نیب کی کارکردگی زیروہے،چیئرمین کوبتائیں ہم کارکردگی سے خوش نہیں،پشاور ہائیکورٹ کے پٹرول اورآٹا بحران کیخلاف درخواست پر ریمارکس

  

پشاور(ڈیلی پاکستان آ ن لائن)پشاور ہائیکورٹ میں پٹرول اورآٹابحران کیخلاف درخواست پرجسٹس قیصر رشید نے ریمارکس دیتے ہوئے کہاکہ نیب کی کارکردگی زیروہے،چیئرمین کوبتائیں ہم کارکردگی سے خوش نہیں،ایک ذات ہے جس کے سامنے ہم اورآپ نے جواب دیناہے۔

تفصیلات کے مطابق پشاورہائیکورٹ میں پٹرول اورآٹابحران کیخلاف درخواست پر سماعت ہوئی،وفاقی وزیرپٹرولیم عمرایوب عدالت میں پیش ہوئے،جسٹس قیصر رشید نے کہاکہ بے فائدہ میٹنگزکی جارہی ہیں،حکومت کیاکررہی ہے؟،عدالت نے کہاکہ پٹرول پمپس پرایس او پیزکاخیال نہیں رکھاجارہا،جسٹس قیصر رشید نے کہاکہ ہمیں میٹنگزمیں دلچسپی نہیں،پہلے آٹااب پٹرول مسئلہ بن گیا،آپ کواس لیے بلایاہے کہ عوام کوجلد ریلیف دیاجائے۔

جسٹس قیصر رشید نے کہاکہ عوام کودیکھ رہے ہیں وہ تکلیف میں ہیں،وفاقی وزیر عمر ایوب نے کہاکہ پٹرول کمپنیوں نے مافیابنایاہواہے،جسٹس قیصر رشید نے کہاکہ لوگوں کےساتھ ہمارااٹھنابیٹھناہے،عمر ایوب نے کہاکہ نوشہرہ اور لاہورمیں چھاپے مارے ہیں، ڈیلرز نے بھی پٹرول ادھرادھر کیاہے،30 فیصدپٹرول کی مانگ میں اضافہ بھی ہوا،10 دن کی سپلائی اب بھی موجودہے،لاک ڈاؤن کی وجہ سے مانگ میں اضافہ ہوا،کمپنیوں کوشوکازنوٹس جاری کیے ہیں۔

جسٹس قیصر رشید نے کہاکہ نیب کی کارکردگی زیروہے،چیئرمین کوبتائیں ہم کارکردگی سے خوش نہیں،ایک ذات ہے جس کے سامنے ہم اورآپ نے جواب دیناہے،آپ نے ادویات مافیاکیخلاف کیاکیا؟،میڈیسن،شوگر،آٹا،پٹرول مافیابناہواہے۔عمرا یوب نے کہاکہ پٹرول شارٹ ہوناتھاتوڈیزل کیوں نہیں ہوا؟،جسٹس قیصر رشید نے کہاکہ آپ جائیں اوررپورٹ پیش کریں۔

جسٹس قیصر رشید نے کہاکہ جب جج اوروزیربن جاتے ہیں توسب بھول جاتے ہیں،وفاقی وزیر پٹرولیم نے کہاکہ ذخیرہ اندوزی جہاں ہورہی ہے ان کوپکڑنہیں پارہے،جسٹس قیصر رشید نے کہاکہ آپ قانون سازی کریں یہ ہمارا ملک ہے،ایسے لوگوں کی نشاندہی کریں، عدالت خوش ہوگی اگرایسے عناصرکیخلاف کارروائی ہوگی۔

وزیرپٹرولیم عمرایوب نے جلدایکشن لینے کی یقین دہائی کراتے ہوئے کہاکہ ایسے عناصرکیخلاف ایف آئی آردرج کی جائےگی،2 سے 3 روزمیں مسئلہ حل کر لیا جائےگا،جسٹس قیصر رشید نے کہاکہ وزیرصاحب اسمبلی کے ایوانوں میں پتہ نہیں چلتا۔

مزید :

اہم خبریں -قومی -علاقائی -خیبرپختون خواہ -پشاور -