سمگل شدہ تمباکو اور جعلی آئی فونز برآمد ہونے پر پاکستانی بزنس مین کو لندن میں 25 ہزار پاؤنڈ جرمانہ

سمگل شدہ تمباکو اور جعلی آئی فونز برآمد ہونے پر پاکستانی بزنس مین کو لندن ...
سمگل شدہ تمباکو اور جعلی آئی فونز برآمد ہونے پر پاکستانی بزنس مین کو لندن میں 25 ہزار پاؤنڈ جرمانہ

  

لندن (ڈیلی پاکستان آن لائن) برطانوی دارالحکومت لندن کے علاقے الفورڈ لین سے معروف بی بی فاطمہ کیش سٹور سے بڑی مقدار میں جعلی آئی فونز اور ممنوعہ تمباکو برآمد کرکے کیش سٹور کے مالک آصف خان کو 25 ہزار پاؤنڈ جرمانہ عائد کردیا گیا ، پولیس نے اس کارروائی میں تمباکو سونگھنے والے کتوں کی مدد لی۔

پاکستانی بزنس مین آصف عزیز خان کے بی بی فاطمہ کیش سٹور پر ریڈ برج کونسل کے انویسٹی گیٹرز نے چھاپہ مارا، یہ ونگ سمگلنگ والے مال اور غیر قانونی اشیا کے خلاف آپریشنز کرتا ہے۔  جعلی آئی فون اور ممنوعہ تمباکو برآمد ہونے کے بعد کراؤن کورٹ کی جانب سے آصف عزیز کی کمپنی اقرا حلال میٹ لمیٹڈ اور بی بی فاطمہ کیش اینڈ کیری کوفی کس 11 ہزار 700 پاؤنڈ جرمانہ کیا گیا جبکہ 950 پاؤنڈ اخراجات کی مد میں ادا کرنے کا حکم دیا گیا ہے، مجموعی طور پر آصف خان کو 25 ہزار 300 پاؤنڈ جرمانہ ہوا۔

غیر قانونی تمباکو اور جعلی آئی فونز کے کیس کا ٹرائل مکمل ہونے کے بعد 20 فروری کو سزا سنائی گئی تھی ، کونسل نے تصدیق کی ہے کہ بی بی فاطمہ کیش اینڈ کیری کی جانب سے جرمانہ ادا کردیا گیا ہے جس کے بعد کونسل ان کے تمام سٹورز کی نگرانی کر رہی ہے۔

کارروائی کے دوران ریڈ برج کونسل کی ٹریڈنگ سٹینڈرڈ ٹیم نے بڑی مقدار میں سمگل شدہ تمباکو برآمد کیا، اس کے علاوہ ایک بند کمرے سے 160 جعلی آئی فون اور مزید سمگل شدہ تمباکو برآمد کیا گیا تھا۔ برآمد شدہ آئی فونز کی نہ تو سکرین اصلی تھی اور نہ ہی کوئی اور حصہ کام کر رہا تھا، انہیں وزن دار بنانے کیلئے میٹل سے بنایا گیا تھا۔

آصف خان نے عدالت میں موقف اپنایا کہ آئی فونز ایک نئی دکان پر ڈمی کے طور پر رکھنے کیلئےتیار کرائے گئے تھے، تاہم وہ عدالت میں یہ ثابت کرنے میں ناکام رہے کہ  وہ واقعی موبائل فونز کا کوئی سٹور کھولنے والے ہیں جس کی وجہ سے انہیں عدالت کے روبرو جھوٹ بولنے کا مجرم  بھی قرار دیا گیا۔

مزید :

برطانیہ -تارکین پاکستان -