سابق ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج کا بیٹا اور بیٹی بہاولپور سے لاپتہ

سابق ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج کا بیٹا اور بیٹی بہاولپور سے لاپتہ

  

بہاولپور(ڈسٹرکٹ رپورٹر) بلوچستان سے تعلق رکھنے والے سابق(بقیہ نمبر8صفحہ6پر)

 ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج کے صادق پبلک سکول میں پڑھنے والے بیٹی اور بیٹا دو روز سے لاپتا،سکول واجبات کی عدم ادائیگی پر سکول میں داخل نہیں ہونے دیا گیا تھا۔تفصیل کے مطابق بلوچستان سے تعلق رکھنے والے سابق ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج عبدالرشید عمرانی نے بتایا کہ میرا بیٹاریان رشیددسویں کلاس اور بیٹی لعلین رشید8 ویں کلاس میں صادق پبلک سکول میں پڑھتے ہیں۔سکول کی جانب سے جو فیس ووچر ہمیں موصول ہوا جس میں ہوسٹل فیس سمیت دیگر واجبات لکھے ہوئے تھے جس پر میں نے سکول انتظامیہ سے وضاحت مانگی کہ جب کووڈ19 کی وجہ سے سکول بند تھے تو ہوسٹل سمیت دیگر واجبات کیوں مانگے گے مگر سکول پرنسپل نے ان کی جانب سے کیے گئے ای میل کا کوئی جواب نہیں دیا سرکاری اعلان کے بعد جب سکول کھولے  گئے تو میرے بچے دو روز قبل رات ساڑے 8 بجے سکول گیٹ پر پہنچے تو ان کو سکول گیٹ پر روک لیا گیا اوررات ساڑے 11 بجے تک وہ گیٹ پر رہے اس دوران میں نے سکول پرنسپل کو فون اور ای میل کرتا رہا کہ میرے بچے ساڑے تین گھنٹے سے سکول گیٹ پر بیٹھے ہیں ان کو اندر آنے دیا جائے مگر پرنسپل کی جانب سے کوئی جواب نہ آیا اور اسی دوران میرے دونوں بچے لاپتا ہوگئے جن کا تاحال کوئی سراغ نہیں ملا۔ سابق ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن جج عبدالرشید عمرانی نے کہا کہ اگر میرے بچوں کے ساتھ کچھ ہوا تو اس کی تمام تر ذمہ داری سکول پرنسپل پر ہو گی کیونکہ سکول انتظامیہ اور پرنسپل  نے انتہائی غیر ذمہ داری کا مظاہرہ کیا گیا۔اس سلسلے میں جب صادق پبلک سکول کے ترجمان سے رابطہ کیا تو انہوں نے واقعہ پر لاعلمی کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ میں چیک کر کے بتاتا ہوں۔

لاپتہ

مزید :

ملتان صفحہ آخر -