زرعی یونیورسٹی پشاور میں بجلی لوڈشیڈنگ کے باعث تعلیمی سرگرمیاں ٹھپ

زرعی یونیورسٹی پشاور میں بجلی لوڈشیڈنگ کے باعث تعلیمی سرگرمیاں ٹھپ

  

پشاور(سٹی رپورٹر)زرعی یونیورسٹی پشاور میں بجلی لوڈشیڈنگ کے باعث تعلیمی سرگرمیاں ٹھپ ہو کے رہہ گئی جبکہ ہاسٹلز میں رہائش پذیر طلباء کو بھی شدید مشکلات کا سامنا کرنا پڑھ رہا ہے  یونیورسٹی میں بجلی لوڈشیڈنگ کے باعث انتظامی امور کی انجام دہی میں بھی مشکلات درپیش ہے طلباء اور ملازمین نے مطالبہ کیا ہے کہ یونیورسٹی میں  جنریٹر کی سہولیات کیلئے ٹھوس منصوبہ بند کی جائے اور واپڈا حکام بھی لوڈشیڈنگ کے خاتمہ کیلئے اپنا کردار ادا کریں بصورت دیگر احتجاج پر مجبور ہونگے حالیہ گرمی کی شدید لہر کے باعث جہاں شہر کے مختلف علاقوں میں لوڈشیڈنگ کا سلسلہ عروج پر ہے وہی زرعی یونیورسٹی بھی لوڈ شیڈنگ کی لپیٹ میں ہے جس سے تعلیمی سرگرمیاں میں خلل پڑنے لگا اور طلبہ،اساتذہ اور ملازمیں سخت گرمی میں رل گئے جبکہ یونیورسٹی میں بعض شعبہ جات کیلئے جنریٹر کی سہولت بھی میسر نہیں اور ہاسٹل میں رہائش پذیر طلباء بھی لوڈشیڈنگ سے عاجز ہو کے رہ گئے  یونیورسٹی کے اساتذہ،ملازمین اور طلبہ نے اس حوالے سے نوٹس لیکر فوری ریلیف فراہم کرنیکا مطالبہ کیا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -