علاقے کی حقوق کیلئے جنگ جیت کے رہینگے،صدیق آفریدی

علاقے کی حقوق کیلئے جنگ جیت کے رہینگے،صدیق آفریدی

  

 خیبر (بیورورپورٹ)ذوان کوکی خیل تنظیم کسی قومیت کے جذبے سے نہیں آئی ہے ضلع خیبر کے میرٹ یافتہ افراد کے حقوق کیلئے لڑے گے  محمد اللہ نے کوکی خیل کی نہیں پوری ضلع خیبر کے حقوق پر ڈھاکہ ڈال دیا ہے علاقے کی حقوق کیلئے جنگ جیت کے رہینگے  ہم کسی قوم کے خلاف نہین سب ہمارے لئے قابل قدر ہین ہر کرپٹ اہلکار کے خلاف جدوجہد جاری رکھیں گے ذوان کوکی خیل تنظیم کے عہدیداران کی لنڈی کوتل پریس کلب میں  پریس کانفرنس سے خطاب ذوان کوکی خیل تنظیم کے صدیق ابرار اشفاق  شاہد و دیگر نے لنڈی کوتل پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہا کہ آفس اسسٹنٹ محمد اللہ آفریدی نے غیر قانونی طور پر اپنے دو بیٹوں اور ڈاکٹر شفیق کے دو بیٹوں کو بھرتی کروا کر ضلع خیبر کے میرٹ پر پورے اور ڈگری ہولڈر افراد کے حقوق پر ڈھاکہ ڈال دیا ہے محمد اللہ نے جعلی انکوائری رپورٹ بنا کر عدالت کو گمراہ کرنے کی کوشش کر رہے ہیں  ایڈوٹزمنٹ میں جونیئر کلرک کی سیٹ نہیں تھی جبکہ ان کا بیٹا جونیئر کلرک کے عہدے پر فائز کیا گیا ہے جو آئین پاکستان کے منافی ہے صدیق آفریدی نے کہا کہ ڈی جی آفس کی انکوائری کے مطابق یہ بھرتیاں غیر قانونی ہیں اس حوالے سے پشاور ہائی کورٹ میں کیس دائر کیا ہے ساتھ ہی ذوان کوکی خیل تنظیم کا 18 ماہ سے احتجاجی تحریک شروع ہیں جبکہ احتجاجی کیمپ کا 19 واں دن اس حوالے سے کسی بھئی ایم پی اے اور ایم نے نہیں آئے جو قابل افسوس ہیں  اداروں سمیت بااثر افراد کو تنبع دیتے ہے کہ کرپٹ اہلکار سے باز رہے  ذوان کوکی خیل صرف کوکی خیل کی نہین پوری ضلع خیبر کے نوجوانوں کی حقوق کی جنگ لڑ رہی ہے صدیق آفریدی، ابرار آفریدی اور اشفاق آفریدی نے بتایا کہ لنڈی کوتل جمرود اور باڑہ میں ذوان کوکی خیل کے خلاف منفی پروپیگنڈا کر کے انہین قومیت اور تعصب کی ہوا دے رہے ہیں جبکہ ذوان کوکی خیل پورے ضلع خیبر کے اقوام کے نوجوانوں کے حقوق کیلئے جنگ لڑ رہی ہے انہوں نے مطالبہ کیا کہ جب تک عدالت میں کیس کا فیصلہ نہیں آتا اس وقت تک محمد اللہ آفریدی کو عہدے سے باز رکھا جائے ذوان کوکی خیل تنظیم کا پولیو بائیکاٹ جاری ہے اور اسکے بعد پلان ڈی رپ غور کیا جائے گا 

مزید :

پشاورصفحہ آخر -