انجینئرنگ یونیورسٹی لاہور میں مالی بے ضابطگیوں کا انکشاف ، آڈٹ ٹیموں کی آمد پر انتظامیہ میں کھلبلی مچ گئی

انجینئرنگ یونیورسٹی لاہور میں مالی بے ضابطگیوں کا انکشاف ، آڈٹ ٹیموں کی ...
 انجینئرنگ یونیورسٹی لاہور میں مالی بے ضابطگیوں کا انکشاف ، آڈٹ ٹیموں کی آمد پر انتظامیہ میں کھلبلی مچ گئی

  

لاہور(ڈیلی پاکستان آن لائن)یونیورسٹی آف انجینئرنگ اینڈ ٹیکنالوجی(یو ای ٹی) لاہورمیں مالی بےضابطگیوں کا انکشاف، وزیر اعلی کی ہدایات پر آڈٹ ٹیمیں یوای ٹی پہنچ گئیں۔

تفصیلات کےمطابق یو ای ٹی میں  آڈٹ ٹیموں کی آمدپرانتظامیہ کی دوڑیں لگ گئیں،آڈٹ ٹیموں نے گزشتہ پانچ سال کا ریکارڈ طلب کرتے ہوئے انتظامیہ سے  ٹی ٹی ایس ٹیچرز کو دی گئی پنشن کار ریکارڈ بھی مانگ لیا ہے ۔آڈٹ ٹیموں نے کروڑوں روپے کے استعمال کے ریکارڈ کی جانچ پڑتا ل شروع کرتے ہوئے حکم دیا ہے کہ سٹور روم میں رکھا گیا ریکارڈ لایا جائے۔

واضح رہے کہ  آڈیٹر جنرل پاکستان نے انجینئرنگ یونیورسٹی کا پانچ سال کے آڈٹ کرنے کا حکم دیا تھا ، وزیراعلیٰ انسپکشن ٹیم کی انکوائری کےبعدمزید انکوائری کافیصلہ کیاگیا ہے۔وزیراعلیٰ انسپکشن ٹیم نےآڈیٹر جنرل سے انکوائری کی سفارش کی تھی۔اس سلسلہ میں  ہائرایجوکیشن کمیشن نےبھی آڈیٹر جنرل کو خط لکھا تھا اور  مراسلہ میں کہا گیا تھا کہ انکوائری رپورٹ ہائر ایجوکیشن کمیشن کو دی جائے۔

مزید :

علاقائی -پنجاب -لاہور -