ورسٹائل اداکار نوازالدین صدیقی ایک نئی مشکل میں پھنس گئے 

ورسٹائل اداکار نوازالدین صدیقی ایک نئی مشکل میں پھنس گئے 
ورسٹائل اداکار نوازالدین صدیقی ایک نئی مشکل میں پھنس گئے 

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائیڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کے لیے یہاں کلک کریں۔

ممبئی(آن لائن)ورسٹائل اداکار نوازالدین صدیقی ایک نئی مشکل میں پھنس گئے ہیں اور انہیں پولیس نے تحقیقات کے لیے پیش ہونے کے لیے سمن جاری کردیا ہے۔نوازالدین صدیقی پر الزام ہے کہ انہوں نے مبینہ طور پر نجی جاسوسوں سے اپنی اہلیہ کا فون ریکارڈ حاصل کرنے کی کوشش کی۔

ریاست مہاراشٹر اور ممبئی کے نواحی شہر تھانے کی کرائم برانچ پولیس سٹیشن نے نوازالدین صدیقی، ان کی اہلیہ اور ان کے وکیل رضوان صدیقی کو بدنام زمانہ کیس کال ڈیٹیل ریکارڈ (سی ڈی آر)کیس کی جاری تحقیقات میں پیش ہوکر اپنا ریکارڈ بیان کرانے کے لیے سمن جاری کردیا۔ڈپٹی کمشنر آف پولیس (ڈی سی پی) کا کہنا ہے کہ اداکار سمیت تینوں افراد کو سی ڈی آر کیس میں ابتدائی تحقیقات مکمل ہونے اور 11 افراد کی گرفتاری کے بعد سمن جاری کیا گیا۔پولیس نے بتایا کہ اداکار، اس کی اہلیہ اور ان کے وکیل کو گرفتار افراد کی نشاندہی کے بعد ہی سمن جاری کیا گیا۔نوازالدین صدیقی کو جاری کیے گئے سمن میں انہیں پولیس تھانے پہنچ کر اپنا بیان ریکارڈ کرانے کو کہا گیا تھا۔

ذرائع کے مطابق نوازالدین صدیقی کو 9 مارچ کو تھانے پولیس کرائم برانچ آکر اپنا بیان ریکارڈ کرانے کو کہا گیا، تاہم اداکار بیان ریکارڈ کرانے نہیں پہنچے۔ اسی کیس میں پولیس نے نجی جاسوسوں سمیت 11 افراد کو گرفتار کر رکھا ہے، جب کہ گرفتار کیے گئے افراد کی نشاندہی پر مزید افراد کو اپنے بیان ریکارڈ کرانے کے لیے سمن جاری کیے گئے ہیں۔

مزید : تفریح