تاریخی سرکلر ڈیبٹ تشویشناک، قابو نہ پایا تو سنگین نتائج بھگتنے پڑیں گے: لاہور چیمبر

تاریخی سرکلر ڈیبٹ تشویشناک، قابو نہ پایا تو سنگین نتائج بھگتنے پڑیں گے: ...

لاہور(کامرس رپورٹر) لاہور چیمبر کے صدر ملک طاہر جاوید، سینئر نائب صدر خواجہ خاور رشید، نائب صدر ذیشان خلیل اور ایگزیکٹو کمیٹی اراکین نے ریکارڈ توڑ سرکلر ڈیبٹ پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس پر قابو پانے کے لیے موثر اقدامات نہ اٹھائے گئے تو آنے والے دنوں میں اس کے بھیانک نتائج برآمد ہونگے۔ ایک بیان میں لاہور چیمبر کے عہدیداروں نے کہا کہ ایک حالیہ رپورٹ نے انکشاف کیا ہے کہ پاکستان کا سرکلر ڈیبٹ تاریخ کی بلند ترین سطح پر ہے اور پاورسیکٹر کے لیے بہت بڑا خطرہ بن چکا ہے۔ انہوں نے کہا کہ سرکلر ڈیبٹ کو ابتدائی سٹیج پر ہی کنٹرول کیوں نہیں کیا جاتا اور متعلقہ اتھارٹیز اس سلسلے میں کیا کررہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بھاری سرکلر ڈیبٹ کی وجہ سے بجلی کی پیداوار میں کمی ہوگی جس سے صنعت، تجارت، زراعت اور عوام سب ہی بْری طرح متاثر ہونگے۔ انہوں نے کہا کہ متعلقہ حکام نے سرکلر ڈیبٹ پر قابو پانے کا آسان طریقہ یہ ڈھونڈ رکھا ہے کہ پاور ڈسٹری بیوشن کمپنیوں کو بھاری سسٹم لاسز کا بوجھ صارفین پر ڈالنے کی اجازت دے دی جاتی ہے جس سے صنعتی شعبے کو سنگین مسائل کا سامنا کرنا پڑتا ہے لیکن اب اگر یہ طریقہ کار اپنایا گیا تو قابل قبول نہیں ہوگا۔ انہوں نے نیپرا پر زور دیا کہ وہ قرضے معاف کرکے ڈیفالٹرز کی حوصلہ افزائی اور اس کا بوجھ صارفین پر ڈالنے سے گریز کرے۔ انہوں نے کہا کہ بجلی کی قیمتوں میں اضافہ ، قرضے معاف کردینا اور یہ سارا بوجھ صارفین پر ڈالنا مسئلے کا حل نہیں ہے، اس کے بجائے نیپرا کو سسٹم کی غیر فعالیت دور کرنا ہوگی۔ انہوں نے کہا کہ بجلی صنعتوں کا اہم خام مال ہے، برآمدات کے حالات پہلے ہی تسلی بخش نہیں اور اگر سرکلر ڈیبٹ پر قابو پانے کے لیے قابل عمل اقدامات نہ اٹھائے گئے حالات مزید خراب ہونگے۔ انہوں نے حکومت پر زور دیا کہ سرکلر ڈیبٹ پر قابو پانے کے لیے کاروباری برادری کی مشاورت سے اقدامات اٹھائے تاکہ ایماندار صارفین متاثر نہ ہوں اور ڈیفالٹرز و بجلی چوروں کو شکنجے میں لایا جاسکے۔

مزید : کامرس

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...