جنگلات کی بحالی اور درختوں کے کٹاؤ، سپریم کورٹ بارکاعدالت عظمیٰ سے رجوع کرنے کا اعلان

جنگلات کی بحالی اور درختوں کے کٹاؤ، سپریم کورٹ بارکاعدالت عظمیٰ سے رجوع کرنے ...

لاہور(نامہ نگارخصوصی) سپریم کورٹ بار نے جنگلات کی160 بحالی اور درختوں کے کٹاوکے خلاف160 سپریم کورٹ سے رجوع کرنے کا اعلان کر دیا۔سپریم کورٹ بار اور ایکو واچ نامی این جی او کے تعاون سے جنگلات کی بحالی کے حوالے سے سیمینار کا انعقاد کیا گیا،،سیمینار سے ماحولیاتی ماہرین اور ماحولیاتی ٹربیونل کے سابق ججز نے شرکت کی اور جنگلات سے متعلق مقدمہ سپریم کورٹ میں دائر کرنے کے حق میں قرار داد منظور کر لی،،سپریم کورٹ بار کے صدر پیر کلیم احمد خورشید نے قرار داد کی روشنی میں جنگلات کے کٹاو اور جنگلات کی بحالی کے لئے سپریم کورٹ سے رجوع کرنے کا اعلان کر دیا،قانون دان ظفر اقبال کلانوری نے کہا کہ بدقسمتی سے ملک میں جنگلات کا رقبہ پانچ فیصد سے کلم ہو کر ایک اعشاریہ نو فیصد رہ گیا ہے،،اگر جنگلات کے بچاو کے لئے اقدامات نہ کئے تو آنے والی نسلیں ہمیں معاف نہیں کریں گی۔ محکمہ موسمیات کے سابق ڈی جی ڈاکٹر قمرالزمان نے خطاب کرتے ہوئے کہا ہوئے کہا کہ موسمیاتی تبدیلیوں سے بچاو کا فوری حل درختوں کی آبیاری اور جنگلات کا تحفظ ہے،ماحولیاتی ٹربیونل کے سابق چیئرمین سید ضمیر حسین نے کہا کہ موجودہ قوانین کے تحت جنگلات کا بچاو ممکن نہیں،،موثر قوانین اور سزاوں میں اضافہ کر کے درختوں کو بچایا جا سکتا ہے۔

مزید : علاقائی

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...