جہلم،پیر کے حکم پر شوہر کا 5سالہ بیٹے اور بیوی کو قتل کرنے کا انکشاف

جہلم،پیر کے حکم پر شوہر کا 5سالہ بیٹے اور بیوی کو قتل کرنے کا انکشاف

جہلم (نامہ نگار)پیر کے کہنے پر پہلے پانچ سال کے بیٹے اور اب بیوی کو قتل کرنے کا انکشاف ، ڈیرھ سال پہلے تعویز لکھنے کے لیے شکیل اپنے بیٹے کا خون نکال رہا تھاجس سے اس کی موت واقع ہو گئی تھی ،بیٹے کے قتل کی وجہ پر بیوی ناراض ہوکر میکے چلی گئی طلاق دینے کے باوجود بیان حلفی دے کر ساتھ لے گیا تھا،چھ مارچ کو والدین کو اطلاع ملی کی طاہر ہ فوت ہو گئی ہے جنازہ کے بعد غسل دینے والی خواتین نے بتایا کہ جسم پر تشدد کے نشان،سرپھٹاہوا اور بازوں ٹوٹے ہوئے تھے،گڑھا سلیم کا رہائشی طاہرہ کا والد طارق ملزمان کے خلاف قانونی کاروائی کے لیے تھانے کے چکر کاٹنے پر مجبور اعلیٰ حکام سے نوٹس لینے کی اپیل ،نواسے کی موت پر غریبی اور برادری کے دباو کی وجہ سے خاموش رہا لیکن اب خاموش نہیں رہوں گا طارق کا بیان تفصیلات کے مطابق گذشتہ روز گڑھا سلیم کے رہائشی طارق نے تھانے میں درخواست دیتے ہوئے ہمارے نمائندے کو بتایا کہ چھ مارچ دن کو مجھے فون پر اطلاع ملی کہ میری بیٹی طاہرہ فوت ہو گئی ہے جب ہم حسن آباد جہلم آئے تو غسل دینے کی تیاری تھی لیکن محلے کی خواتین غسل نہیں دے رہی تھی تو میری بہن ودیگر خواتین نے غسل دیا نماز جنازہ کے بعد غسل دینے والی خواتین نے مجھے بتایا کہ طاہرہ کے جسم پر تشدد کے نشان تھے سر پھٹا ہوا تھا اور دونوں بازوں ٹوٹے ہوئے تھے تو مجھے سمجھ نہیں آرہی تھی کہ میں کیا کرواس سے پہلے ڈیڑھ سال پہلے میرا داماد شکیل سرائے عالمگیر کے پیر عامر شاہ کے کہنے پر تعویز لکھنے کے لیے اپنے پانچ سالہ بیٹے شوکت کا خون نکالتا تھا اور ایک دن وہ بچہ شکیل کے ہاتھوں چھرا لگنے سے جابحق ہو گیا تھا اس وقت میں غریبی اور برادری کے بڑوں کے دباو کی وجہ سے کوئی قانونی کاروائی تو نہ کر سکا لیکن میری بیٹی طاہرہ ناراض ہو کر میرے پاس آگئی تھی اس دوران شکیل نے اسے طلاق دے دی بعد میں برادری کے لوگوں کے ساتھ آیا اور بیان حلفی لکھ کردیا کہ اب ایسا نہیں ہو گا طارق نے بتایا کہ میرے داماد شکیل نے پیر عامرشاہ کے ساتھ مل کر میری بیٹی کو قتل کیا ہے میں انصاف کے لیے دربدر کی ٹھوکریں کھا رہا ہوں میری اعلی حکام سے پرزور اپیل ہے کہ وہ نوٹس لے کرمجھے انصاف فراہم کریں

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر