سری لنکا میں مسلمانوں کے خلاف تشدد کی لہر شدید ہوگئی، ایسا کام ہوگیا کہ ہر مسلمان کی آنکھیں نم ہوجائیں گی

سری لنکا میں مسلمانوں کے خلاف تشدد کی لہر شدید ہوگئی، ایسا کام ہوگیا کہ ہر ...
سری لنکا میں مسلمانوں کے خلاف تشدد کی لہر شدید ہوگئی، ایسا کام ہوگیا کہ ہر مسلمان کی آنکھیں نم ہوجائیں گی

  



کولمبو(مانیٹرنگ ڈیسک) میانمارمیں روہنگیا مسلمانوں کے قتل عام کے بعد اب بدھ دہشت گردوں نے سری لنکا میں بھی مسلمانوں پر عرصہ حیات تنگ کر دیا ہے جہاں ان کی املاک نذرآتش کی جا رہی ہیں اور جو مسلمان بھی ہاتھ لگے اسے موت کے گھاٹ اتارا جا رہا ہے۔ دی ٹائم کی رپورٹ کے مطابق سری لنکا میں مسلمان مخالف فسادات اس قدر پھیل چکے ہیں کہ متاثرہ علاقوں میں کرفیو نافذ کر دیا گیا ہے لیکن کرفیو کے باوجود بدھ دہشت گردوں کی کارروائیاں جاری ہیں۔

رپورٹ کے مطابق کرفیو کے باوجود گزشتہ روز پیلیماتھلوا نامی قصبے میں 50سے زائد بدھ دہشت گردوں نے محمد رمزین نامی مسلمان کے چھوٹے سے ہوٹل پر حملہ کرکے اسے نذرآتش کر دیا۔ خوش قسمتی سے رمزین اس وقت ہوٹل پر موجود نہیں تھا اور اس کی جان بچ گئی۔ اس نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا ہے کہ ”اس قصبے میں سکیورٹی بہت کم ہے اور ہمیں اپنی جانوں کے لالے پڑے ہوئے ہیں۔ ہم ایک مسلسل خوف کے عالم میں زندگی گزارنے پر مجبور ہیں۔“ رپورٹ کے مطابق دیگر کئی علاقوں میں بھی کرفیو کے باوجود مسلمانوں کے گھروں پر حملوں کی خبریں آ رہی ہیں۔

مزید : بین الاقوامی


loading...