صنعتی ترقی سے معیشت مضبوط ہو گی ، سرمایہ کاروں کو ہر ممکن سہولتیں دیں گے : عثمان بزدار

صنعتی ترقی سے معیشت مضبوط ہو گی ، سرمایہ کاروں کو ہر ممکن سہولتیں دیں گے : ...

لاہور(خصوصی رپورٹ) وزیر اعلیٰ پنجاب عثمان بزدار نے کہا ہے کہ صنعتی سیکٹر کافروغ اور صنعتی عمل تیز کرنے کیلئے اقدامات ہماری ترجیحات میں اولین ہیں۔تحریک انصاف کی حکومت کاروبارمیں آسانیاں پیدا کرنے کیلئے ٹھوس اقدامات کررہی ہے ۔سرمایہ کا روں اورصنعتکاروں کو کاروبار کرنے میں ہرممکن سہولتیں دیں گے اورکاروباری سرگرمیاں تیزکرنے کے عمل میں کسی کو رکاوٹ نہیں ڈالنے دی جائے گی۔صنعتی سیکٹر کے فروغ سے روزگار کے نئے مواقع پیدا ہوں گے اورمعیشت مضبوط ہوگی۔ان خیالات کا اظہار وزیراعلیٰ عثمان بزدار نے وزیراعلی آفس میں صنعتکاروں کے وفد سے گفتگو کرتے ہوئے کیا،جنہوں نے ان سے ملاقات کی۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ اپنے پاؤں پر کھڑے ہونے کیلئے صنعتی شعبے کی پائیداربنیادوں پر ترقی ضروری ہے اور تحریک انصاف کی حکومت کے آنے سے پاکستان میں کاروباری ماحول بہتر ہواہے۔ تحریک انصاف کی حکومت ملکی معیشت کی گاڑی کو آگے لے کرجائے گی۔انہوں نے کہا کہ ملکی معیشت کے استحکام کیلئے صنعتی ترقی انتہائی اہمیت کی حامل ہے۔ صنعتوں کی ترقی اور سرمایہ کاروں کو سہولیات کی فراہمی ہماری معاشی منصوبہ بندی کا بنیادی ستون ہے۔ وزیر اعلیٰ نے کہا کہ تحریک انصاف کی حکومت نے صنعتی سیکٹر کے فروغ کیلئے سپیشل اکنامک زونز کے قیام کا فیصلہ کیا ہے ۔نئے صنعتی زونز کے علاوہ پرانی انڈسٹریل اسٹیٹس کو بھی ڈویلپ کیا جائے گا اورانڈسٹریل اسٹیٹس میں صنعتکاروں کو صنعتیں لگانے کیلئے ترجیحی بنیادوں پر سہولتیں دیں گے اور نئی صنعتیں لگانے کیلئے فائل بلاوجہ کسی جگہ رکے گی نہیں۔انہوں نے کہا کہ حکومت چھوٹی صنعتوں کے فروغ کیلئے انقلابی نوعیت کے ا قدامات کر رہی ہے۔ہم صنعتکار دوست ماحول کو پروان چڑھائیں گے اورصنعتی شعبہ کی ترقی کیلئے کسی قسم کی ریڈ ٹیپ ازم کو حائل نہیں ہونے دیا جائے گا۔ عثمان بزدارنے سماجی رابطوں کی ویب سائٹ پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا ہے کہ پنجاب حکومت کا اساتذہ کے تبادلے کیلئے آن لائن پورٹل سسٹم متعارف کرانے کا فیصلہ کیا ہے ۔کرپشن کے خاتمے اور اساتذہ کی ٹرانسفر میں آسانی کیلئے آن لائن پورٹل سسٹم کا آغاز جلد ہو جائے گا۔ آن لائن پورٹل سسٹم سے اساتذہ کو تبادلہ کروانے کیلئے مختلف دفا تر کے چکر نہیں لگانے پڑیں گے۔انہوں نے کہا کہ گزشتہ حکومتوں نے بچوں کے داخلے اور حاضری کی ذمہ داری اپنے کندھوں سے اتار کر اساتذہ پر ڈال دی تھی۔پنجاب حکومت شعبہ تعلیم میں اصلاحاتی پروگرام کے تحت گزشتہ حکومتوں کے قواعد تبدیل کر رہی ہے۔ بچوں کا داخلہ اور حاضری یقینی بنانا اب اساتذہ کی نہیں بلکہ محکمے اور کمیونٹی کی ذمہ داری ہو گی۔

مزید : صفحہ اول