نواز شریف کو کچھ ہوا تو ذمہ دار حکمران ہونگے ‘ مسز شہناز سلیم

نواز شریف کو کچھ ہوا تو ذمہ دار حکمران ہونگے ‘ مسز شہناز سلیم

ڈیرہ غازی خان( بیورورپورٹ ) نیب قوانین کے تحت میاں محمد نواز شریف کی بریت کی اپیل کا فیصلہ تیس دنوں میں ہو جانا چاہیے، ملزم کے بنیادی حقوق دیکھ کر عدالت جلد فیصلہ سنائے۔(بقیہ نمبر54صفحہ12پر )

حکومت اور عمران خان این آر او نہیں دے سکتے، یہ ان کے اختیارات میں نہیں، عمران خان بھی لندن علاج کرانے گئے میاں محمد نواز شریف تین بار وزیر اعظم رہے، ملک کی بڑی پارٹی کے سربراہ ہیں، انہیں کچھ ہوا تو حکمران ذمہ دار ہوں گے۔ ان خیالات کا اظہار مسلم لیگ ن کی ممبر قومی اسمبلی مسز شہناز سلیم ملک نے صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کیا۔ انہوں نے کہا کہ میاں محمد نواز شریف کو عدالتوں میں دائر اپنی اپیلوں پر فیصلہ کا انتظار ہے۔ نیب قوانین کی دفعہ32 کے تحت لازمی ہے کہ سزا یافتہ شخص کی اپیل کا فیصلہ عدالت تیس دنوں میں کرے، عمران خان اور وزراء کو این آر او دینے کا اختیار نہیں، اور نہ ہی میاں محمد نواز شریف نے کسی سے این آر او مانگا۔ پی ٹی آئی کے حکمرانوں کو این آر او پر جھوٹ بولتے شرم آنی چاہیے۔ بیماری اللہ کی طرف سے آتی ہے۔ اپیل پر حتمی فیصلہ آتے ہی میں محمد نواز شریف اچھے ڈاکٹر اور اچھے ہسپتال میں علاج کرائیں گے، عمران خان لندن میں علاج کرا سکتے ہیں میاں محمد نواز شریف وہاں علاج کے اخراجات برداشت کر سکتے ہیں۔

شہناز تبسم

Bac

مزید : ملتان صفحہ آخر