خاصہ دار ولیو یز فورسز کے مستقبل کو کوئی خطرہ لاحق نہیں : علامہ نو رالحق قادری

خاصہ دار ولیو یز فورسز کے مستقبل کو کوئی خطرہ لاحق نہیں : علامہ نو رالحق قادری

مہمند (نمائندہ پاکستان) مہمند، خاصہ دار و لیویز فورسز کے مستقبل کو کوئی خطرہ لاحق نہیں ہے۔ خاصہ دار اور لیویز فورس کے حوالے سے جلد آرڈیننس جاری ہوگا۔ موجودہ حکومت کسی شخص کو بے روزگار نہیں کریگا۔ قبائلی اضلاع کے ایم این ایز کی مشاورت سے تفصیلی پالیسی مرتب ہوگی۔ بعض لوگ خاصہ دار اور لیویز فورسز پر سیاست نہ چمکائے۔ان خیالات کا اظہار وفاقی وزیر مذہبی اُمور نور الحق قادری کا چیئر مین سٹینڈنگ کمیٹی برائے سیفران ایم این اے ساجد خان مہمند کے چچا کے وفات پر تعذیتی دعا کے بعد عوام سے خطاب کے دوران کیا۔ انہوں نے کہا کہ قبائلی علاقہ جات میں قیام امن کیلئے خاصہ دار اور لیویز فورسز نے بے پناہ قربانیاں دی ہیں۔ موجودہ حکومت کے ساتھ ان کے قربانیاں اور ان کی صلاحیتں تسلیم کرتی ہے۔ ان کی سروس کے مستقبل کو کوئی خطرہ نہیں ہے۔ حکومت کی جانب سے جلد ان کیلئے آرڈیننس جاری ہوگا اور قبائلی اضلاع کے ایم این ایز کی مشاورت سے مربوط پالیسی بنائینگے۔ نور الحق قادری نے کہا کہ قبائلی اضلاع خیبر پختونخواہ میں ضم ہو چکے ہیں اور آئین پاکستان یہاں لاگو ہو گیا ہے۔ بعض لوگ خاصہ دار اور لیویز فورس پر اپنا سیاست چمکا رہے ہیں۔ فاٹا انضمام تمام سیاسی جماعتوں کا متفقہ فیصلہ تھا۔ تعزیتی دعا کے بعد وفاقی وزیر نے تحصیل حلیمزئی چاندہ کے مقام پر دارالعلوم عزیزیہ محمودیہ کا بھی دورہ کیا۔ مدرسے کے مہتمم امیر اللہ جنیدی اور امین الحق عرف صاحب حق نے ان کو مدرسے میں جاری تعمیراتی کا م پر بریف کیا۔ اس دوران تقریب سے وفاقی وزیر نے کہا کہ موجودہ حکومت وزیر اعظم عمران خان کی قیادت میں مدینہ کی ریاست کے ماڈل کو سامنے رکھ کر حکمرانی کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ عمران خان خدمت کے جذبے سے سرشار ہے۔

مزید : پشاورصفحہ آخر