فروغ تعلیم میں نجی سیکٹر کی اہمیت سے انکار ممکن نہیں‘ محمد سلیم

فروغ تعلیم میں نجی سیکٹر کی اہمیت سے انکار ممکن نہیں‘ محمد سلیم

تیمرگرہ ( بیو رورپور ٹ )پرائیویٹ ایجوکیشن نیٹ ورک نے تعلیمی سیکٹر میں پی ایم ایس افسران کی تقرری کو مسترد کردیا اسسمنٹ کے نام پر پانچویں اور آٹھویں جماعت کے امتحانات کے خلا ف عدالت سے رجوع کرنے کا اعلان،حکومت سے ووچرز سکیم کے فنڈز فوری ادا کرنے کا مطالبہ بصورت دیگر صوبہ بھر میں تعلیم بچاومہم شر وع کرنے کا اعلان ۔اس حوالے سے تیمرگرہ ریسٹ ہاو س میں پرائیوٹ ایجوکیشن نیٹ ورک دیرلوئیر کے زیر اہتمام پرنسپلز کنونشن کا انعقاد کیا گیا جس میں ضلع بھرکے پزنسلپز نے کثیر تعداد میں شرکت کی ،اپنے خطاب میں PENکے صوبا ئی صدر محمد سلیم خان ،صو با ئی سنےئر نائب صدر امجدعلی شاہ ،ضلعی صدر عبدالودود ودیگر نے کہا کہ حکومت کی جانب سے محکمہ تعلیم کے انتظا می پوسٹوں پر پی ایم ایس افسران کی تقرری کسی صور ت قابل قبول نہیں ،ماہرین تعلیم ہی شعبہ تعلیم کے مسائل کا ادارک رکھتے ہیں جس کے لئے پی ایم ایس افسران کی کو ئی ضرور ت نہیں ،مقررین نے کہا کہ فروغ تعلیم میں نجی سکیڑ کے اہمیت سے انکار ممکن نہیں ،پرا ئیوٹ سیکٹر ہزاروں نادار اور یتیم بچوں کو مفت تعلیم فراہم کررہا ہیں،اس لے حکومت پرا ئیوٹ تعلیمی سیکٹر کو سوشل سیکٹر قرار د یکر تمام تر ٹیکسز سے مستثنی قرارد ینے کا اعلان کردے ،مقررین نے کہا کہ گزشتہ کئی برسو ں سے واوچرز اسکیم کے تحت ہزاروں اسٹر یٹ چلڈ ر ن کوکم فیس پر داخلے دئیے گئے تا ہم حکومت کی جانب سے بقایا جا ت کی تا ایں وقت ادا ئیگیاں نہ ہو نا قابل افسوس ہے ،بار بار اسسمٹنٹ کے نام پر جماعت پانچویں اور اٹھویں جماعتوں کے امتحانات کروائے گے یہ تجربات مزید بل قبول نہیں ،کنونشن میں بورڈ انتظا میہ سے پرا ئیو ٹ اور سرکار ی تعلیمی اداروں میں تفریق نہ کرنے ،مارکنگ اور پیپر تیاری نظام کو مزید بہتر بنانے کے مطالبات کئے گئے ،کنونشن سے ممبران پی ایس آر فضل اللہ داوزئی ،انس تکریم ،باجو ڑ پرائیوٹ سکول ایسوسی ایشن کے صدر نور رحمان ،سجاد حیات ،فرید اللہ اور اسد اللہ نے بھی خطاب کیا

مزید : پشاورصفحہ آخر