پی ایس ایل میچ اور ٹریفک کی بندش!

پی ایس ایل میچ اور ٹریفک کی بندش!

  

لاہور ہائیکورٹ میں دائر درخواست پر فاضل عدالت نے نوٹس لیا اور اس پر برہمی کا اظہار کیا ہے کہ پی ایس ایل کے میچوں کی وجہ سے شہر میں ٹریفک کے مسائل پیدا ہوئے اور شہری پریشان ہیں۔ فاضل عدالت نے ہدائت کی کہ ٹریفک کی روانی کو یقینی بنایا جائے اور ٹریفک پلان بنا کر عدالت میں بھی پیش کیا جائے۔جہاں تک ٹریفک کا تعلق ہے تو مسئلہ کراچی، لاہور، راولپنڈی، پشاور اور تمام دیگر شہروں کا بھی ہے، تاہم جب سے کرکٹ کی بحالی کے حوالے سے پی ایس ایل کے میچ شروع ہوئے۔کراچی، ملتان، لاہور اور راولپنڈی میں پیچیدگی زیادہ ہو گئی کہ میچوں کے شیڈول کے مطابق حفاظتی انتظامات کئے جاتے ہیں تو ساری زد ٹریفک کی روانی پر آتی ہے۔ سٹیڈیم کو آنے جانے والی سڑکیں دور دور سے بند کر دی جاتی ہیں۔ ان سڑکوں پر ٹریفک کی بندش کے بعد ملحقہ سڑکوں پر دباؤ ناقابل برداشت ہو جاتا ہے اور گاڑیاں پھنس کر رہ جاتی ہیں، حتیٰ کہ ایمبولینس تک کو بھی راستہ نہیں ملتا۔لاہور میں ہونے والے میچوں کی وجہ سے سٹیڈیم کے اردگرد تو کرفیو لگایا جاتا ہے لیکن فیروزپور روڈ کو بھی بند کر دیا جاتا ہے۔ اس سے ٹریفک کا دباؤ ملحقہ سڑکوں پر آ جانے سے راستے بند ہو جاتے ہیں کہ قصور والی ٹریفک بھی ادھر سے گزرتی ہے۔ حالانکہ قذافی سٹیڈیم کو ہر قسم کی سواری کے لئے بند کرنے اور چاروں طرف سیکیورٹی سٹاف متعین کر دینے کے بعد فیروزپور روڈ کا یہ حصہ بند کرنے کی بھی ضرورت نہیں ہوتی۔ بہرحال ایک شہری کی درخواست پر اب عدالت عالیہ نے نوٹس لیا ہے تو انتظامیہ کو بھی اثر قبول کرنا اور شہریوں کی پریشانی کا احساس کرنا چاہیے۔ زیادہ بہتر انتظامات بھی ہو سکتے ہیں۔

مزید :

رائے -اداریہ -