پنجاب میں پہلی سپیشل ایجوکیشن پالیسی متعارف کروائینگے: چودھری سرور

پنجاب میں پہلی سپیشل ایجوکیشن پالیسی متعارف کروائینگے: چودھری سرور

  

لاہور(نمائندہ خصوصی) گور نر پنجاب چودھری محمدسرور نے قومی اور صوبائی اسمبلیوں میں سپیشل افراد کیلئے بھی مخصوص نشستوں کی تجویز دیتے ہوئے کہا ہے کہ پنجاب کی تاریخ میں پہلی بار سپیشل ایجوکیشن پالیسی متعارف کروائی جا رہی ہے۔ سپیشل ایجوکیشن ڈیپارٹمنٹ کے زیر اہتمام ''معذوری نہیں قابلیت ''منعقدہ سیمینار سے خطاب کر تے ہوئے گورنر پنجاب نے کہا کہ سپیشل بچو ں کیلئے لاہور سمیت پنجاب بھر میں 300سے زائد ادارے قائم کر رہے ہیں جن میں 35ہزار سے زائد طلباء اور طالبات تعلیم وتر بیت حاصل کر رہے ہیں جہاں بچوں کو فری تعلیم کیساتھ فری کتابیں،فری ٹر انسپورٹ، فری یونیفارم اور800 روپے ماہانہ سکالر شپ دی جا رہی ہیں۔انہوں نے کہا کہ معذورافراد کی معاشی بحالی کیلئے ہر سطح پر سیاسی امور میں انکی شمولیت لازم وملزم ہے ا نشاء للہ اسمبلیوں میں سپیشل افراد کی مخصوص نشستوں کیلئے قانون سازی سمیت دیگر اقدامات کیے جائیں گے، گور نر ہاؤس کے دروازے سپیشل افراد کیلئے24گھنٹے کھلے ہیں۔ اس موقعہ پر صوبائی وزیر سپیشل ایجوکیشن چوہدری اخلاق احمد، سیکرٹری سپیشل ایجوکیشن سید جاوید اقبال بخاری،چیف ایگز یکٹو اخوت ڈاکٹر امجد ثاقب،ڈاکٹر شاہین پاشا،پنجاب یونیورسٹی سے ڈاکٹر حمیرا بانو سمیت دیگر بھی موجود تھے۔بعد ازاں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ بہت سے چینی باشندے لاہور سمیت ملک کے دیگر شہروں میں کام بھی کر رہے ہیں،ابھی تک کروناوائرس کے 15 مر یض ہی سامنے آئے ہیں اور ان میں بھی بعض مر یض تیزی کیساتھ صحت یاب بھی ہورہے ہیں۔ صوبائی وزیر سپیشل ایجوکیشن چوہدی اخلاق احمد نے کہا کہ یہ معذور نہیں بلکہ منفردافرادہیں جن کیلئے پنجاب حکومت نے 1000ملین روپے مختص کیے ہوئے ہیں اور آئندہ بجٹ میں ہم اس بجٹ کو2ہزار ملین روپے تک لیکر جائیں گے۔

گورنر سیمینار

مزید :

صفحہ آخر -رائے -