عورت او ر حیا مارچ کے منتظمین کو اکٹھا کرنا خوش آئند ہے،سمیعہ راحیل

عورت او ر حیا مارچ کے منتظمین کو اکٹھا کرنا خوش آئند ہے،سمیعہ راحیل

  

لاہور(لیڈی رپورٹر)حکو مت کی جانب سے عورت ما رچ اور حیا ما رچ کے منتظمین کو اکھٹا کر نے کا فیصلہ خواش آئند ہے لیکن ہماری جما عت سے ابھی تک کسی بھی حکو متی نما ئندہ نے را بطہ نہیں کیا ہے۔ہم نے کبھی عورت مارچ کی مخالفت نہیں کی بلکہ ان سلوگن سے مسلہ ہے جن کو ہم اپنی زبان پر بھی لانا نہیں چاہتے جس کو ہر سطحح پر تشریح کے کے لیے تمام سطحوں پر دیکھا گیا ہے ہم نے واضع الفاظ میں کہاہے کہ خواتین کا دن اس بات کا مرہون منت ہے کہ خواتین کے مسائل موجود ہیں ان کو حکومتی سطح پر منظور تو کیاگیامگر اس پر کبھی عملدرآمد نہیں کیاگیا ہم خود ان خواتین کے مسائل کو ایک چارٹر کی شکل میں لائے ہیں تکریم نسواں مارچ کی کا میا بی اس با ت کی عکاس ہے کہ ہمارے معاشرہ کی خواتین اسلامی اقداروں کے مطا بق ہی زندگی گزارنا پسند کر تی ہیں ۔ خواتین کے عالمی دن کو منا نے کا مقصد ہما رے ملک کی خواتین کو جن بنیا دی مسائل کا سا منا ہے ان کے حق کے لئے با ت کر نا ہے ۔اں خیا لا ت کا اظہا ر تکریم نسواں مارچ کی منتظم اعلی سمیعہ را حیل قاضی اور ڈاکٹر زبیدہ جبیں نے ”روزنا مہ پا کستان“ سے گفتگو کر تے ہو ئے کیا۔ انہو ں نے کہا کہ ہما را ملک اسلامی اقدا روں پر قائم کیا گیا ہے اوہما رے معاشرے میں عورت کی عزت اور تکریم کو اولین حیثیت حا صل ہے۔

لیکن چو نکہ ہمارے حکو متی ترجیحات میں خواتین کے مسا ئل کا حل کر نا شا مل نہیں رہا ہے اس لئے ہمارے خواتین کو بے شما ر مسائل کا سا منا ہے جن میں تعلیمی، خا نگی،صحت، اور ڈومیسٹک وائلینس سمیت ہرا سمنٹ بھی شا مل ہے ۔ انہو ں نے کہا کہ ہمیں خو شی ہے کہ ہمارے مارچ کو ملک گیر پذیرای حا صل ہو ئی ہے اور تکریم نسواں ما رچ میں ہر طبقہ فکر کی خواتین نے بھرپو ر شرکت کر کے ہمارے ارادوں کو تقویت بخشی ہے۔ انہو ں نے کہا کہ حکو مت کو بہت پہلے ایکشن لے لینا چا ہیے تھا کہ آزادی کے نام پر عورت کی عزت کو ایسے یشو نہ بنا یا جا ئے کو ئی بھی مہذب اور اسلا می معا شرہ اس کی اجازت نہیں دیتا ہے۔انہو ں نے کہا کہ ہم نے خواتین کے مسا ئل کو حل کر نے کے چند مطا لبا ت پیش کئے ہیں جن میں معاشرے میں ہر سطح پر عورت کی عزت کو تحفظ، فریضہ تعلیم کا حصول، عورت کی حق کفا لت کو یقینی، گھریلو تشدد کی روک تھا م، ورا ثت میں حق، گھر میں عورت کی نگرا نی کو فخر جیسے مطا لبا ت ہیں اگر حکو مت ان کا اطلا ق کر دے تو عورت مکمل طو ر پر با اختیا ر ہو جا ئے گی۔۔۔۔

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -