کرونا وائرس سے عمرہ ہوٹل اور ایئر لائنز انڈسٹری کا کاروبار ٹھپ

کرونا وائرس سے عمرہ ہوٹل اور ایئر لائنز انڈسٹری کا کاروبار ٹھپ

  

لاہور (ڈویلپمنٹ سیل)عمرہ انڈسٹریز کیساتھ ہوٹلز اور ائیر لائز کا کاروبار بھی کرونا وائرس کی بھینٹ چڑھ گیا عمرہ آپریشن پر اچانک پابندی سے عمرہ کا کاروبار کرنیوالے دیوالیہ ہوگئے کروڑوں کا نقصان، عمرہ ویزہ کے بعد روانگی سے رہ جانے والوں کو رقوم کی واپسی بھی شروع نہ ہوسکی عمرہ کے لیے حرمین شریفین میں موجود ہزاروں عمرہ زائرین بھی رل گئے مدینہ سے مکہ جانے پر پابندی کے بعد ان ڈائریکٹ فلائٹس پر وطن واپسی کی اجازت نہ ملنے کی وجہ سے عمرہ زائرین بے بس ڈائریکٹ فلائٹس کے لیے نئے ٹکٹ کہاں سے بنوائیں عمرہ ایجنٹ بھی رابطے میں نہیں ہوٹل اضافی رکھنے کیلئے تیار نہیں احرام کیساتھ حرم شریف میں آنے کی اجازت نہیں عمرہ کاروبار کرنیوالے تصور بھی نہیں کرسکتے تھے نوبت یہا ں تک پہنچ سکتی ہے مکہ مکرمہ میں موجود خارجی حضرات خوف میں مبتلا۔رمضان عمرہ بھی خطرے میں قرار دیا جانے لگارمضان کیلئے دنیا بھر کے عمرہ ایجنٹوں کے ایڈوانس کئے گئے معاہدے کینسل ہونا شروع ہوگئے امریکہ،یورپ کے ایجنٹوں نے حج 2020ء کیلئے کیے گئے معاہدے بھی کینسل کرنا شروع کر دیئے دنیا بھر سے اس وقت حرمین شریفین میں ڈھائی لاکھ سے زائد عمرہ زائرین موجود ہیں ہر گھنٹے بعد نیا فرمان آرہا ہے عمرہ زائرین کی بڑی تعداد ہوٹل تک محدود ہوکررہ گئی ہے مدینہ سے نکلنے والوں کی سخت چیکنگ کی جارہی ہے مدینہ میں موجود افراد کو ہدایت کی گئی ہے کہ وہ مدینہ سے اپنے اپنے ممالک جانے کا انتظام کریں اسی طرح مکہ سے مدینہ جانے پر پابندی لگا دی گئی ہے مکہ والوں کو جدہ سے واپسی کا کہا گیا ہے عمرہ،ہوٹل اور ائیر لائنز کو روزانہ کی بنیاد پر کروڑوں کے نقصان کا سامنا ہے آنے والے دنوں میں بحالی کے امکانات بھی مخدوش دکھائی دے رہے ہیں۔

عمرہ انڈسٹری

مزید :

صفحہ آخر -رائے -