کرونا وائرس کا امریکی صدر کے گرد گھیرا تنگ، 2قریبی ساتھی متاثر ہونے کا شبہ

کرونا وائرس کا امریکی صدر کے گرد گھیرا تنگ، 2قریبی ساتھی متاثر ہونے کا شبہ

  

واشنگٹن(آئی این پی،شہنوا)امریکی صدر ٹرمپ کے 2قریبی ساتھیوں کا کرونا وائرس کا شکار ہونے کا شبہ ظاہر کیا گیا ہے،دونوں کو الگ کر دیا گیا ہے،ٹرمپ سے متعلق امریکی نائب صدر مائیک پینس کا کہنا ہے کہ نہیں معلوم کہ صدر ٹرمپ کا کرونا وائرس کا ٹیسٹ ہوا یا نہیں، وائٹ ہاوس کے ڈاکٹر سے رجوع کروں گا۔ بین الاقوامی خبر رساں ادارے کے مطابق امریکی صدر ٹرمپ کے 2قریبی ساتھیوں کا کرونا وائرس کا شکار ہونے کا شبہ ظاہر کیا گیا ہے، وائٹ ہاؤس کے نامزد چیف تین دن قبل ٹرمپ سے بھی ہاتھ ملا چکے ہیں۔بتایا گیا ہے کہ امریکا میں صدر ٹرمپ سے قریبی رابطہ رکھنے والے کانگریس کے دو ارکان میں کرونا کا شبہ ہے، دونوں ارکان کو الگ کر دیا گیا۔ خبر ایجنسی کے مطابق ری پبلکن رکن ڈوگ کولنز نے ٹرمپ سے ہاتھ ملایا تھا جبکہ میٹ گیٹز نے ٹرمپ کے ساتھ ایئرفورس ون میں سفر کیا تھا۔امریکی نائب صدر مائیک پنس نے کہا ہے کہ انہیں نہیں معلوم کہ صدر ٹرمپ کا کرونا وائرس کا ٹیسٹ ہوا یا نہیں، وائٹ ہاوس کے ڈاکٹر سے معلومات لے کر جواب دوں گا۔ دوسر ی جانب وائٹ ہاؤس نے کہا ہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کے کرونا وائرس کے ٹیسٹ نہیں ہوئے۔وائٹ ہاس کی پریس سیکرٹری سٹیفنی گریشام نے صحافیوں کو بتایا کہ صدر کے کرونا وائرس کے ٹیسٹ نہیں ہوئے کیونکہ نہ تو ان کے کسی کرونا وائرس کے مریضوں سے طویل قریبی رابطے رہے ہیں اور نہ ہی ان میں کوئی علامات ظاہر ہوئی ہیں۔انہوں نے کہا کہ صدر ٹرمپ بہترین صحت کی حالت میں ہیں اور ان کے معالج ان کی قریبی دیکھ بھال کررہے ہیں۔

ٹرمپ/کرونا

مزید :

صفحہ اول -