ججز کا چیک اپ کے بہانے ہائیکورٹ ڈسپنسری کا عملہ غائب

      ججز کا چیک اپ کے بہانے ہائیکورٹ ڈسپنسری کا عملہ غائب

  

لاہور(نامہ نگار)لاہور ہائی کورٹ ڈسپنسری کا ڈاکٹر اورلیب ٹیکنیشن مبینہ طور پرڈیوٹی سے اکثر غائب رہنے لگے،جس کے باعث عدالت عالیہ کے عملے کو چیک اور میڈیکل ٹیسٹ کروانے مشکلات کا سامناکرنا پڑ رہاہے،لیب ٹیکنیشن اور ڈاکٹر کی ڈیوٹی ٹائم میں عدم موجودگی سے عدالتی عملہ اورہائیکورٹ بار ہسپتال سے علاج کروانے پر مجبورہیں، ذرائع کے مطابق لیب ٹیکنیشن زوار احمد روزانہ صبح ساڑھے 9 بجے ڈسپنسری آتا ہے اور 10 بجے ڈیوٹی سے غائب ہو جاتا ہے، اسی طرح ڈاکٹر علی گل ججوں کے چیک اپ کے نام پر ہائیکورٹ ڈسپنسری سے اکثر غائب ہوجاتے ہیں، ہائیکورٹ کے عدالتی افسران اور ملازمین 9 بجے سے ساڑھے 11 بجے تک عدالتی کارروائی میں مصروف رہتے ہیں، عدالتی امور سے فراغت کے بعد معانئے کے لئے جب وہ ڈسپنسری جائیں تو ڈاکٹر اور لیب ٹیکنیشن ڈیوٹی غائب ہوتے ہیں۔

عملہ غائب

مزید :

پشاورصفحہ آخر -