نیب کو صرف اپوزیش کیخلاف کیسنر بنانے کیلئے استعمال کیا جارہا ہے: محسن نواز رانجھا 

نیب کو صرف اپوزیش کیخلاف کیسنر بنانے کیلئے استعمال کیا جارہا ہے: محسن نواز ...

  

 اسلام آباد(آئی این پی)پاکستان مسلم لیگ (ن)کے راہنما اور رکن قومی اسمبلی بیرسٹر محسن نواز رانجھا نے کہا ہے کہ بابر اعوان بحیثیت مشیر قومی اسمبلی میں جتنے بھی بل پیش کر رہے ہیں وہ سب غیر آئینی و غیر قانونی ہیں اس حوالے سے اسلام آباد ہائیکورٹ حفیظ شیخ کیس میں فیصلہ دے چکی ہے کہ مشیر یا معاون خصوصی انچارج وزیر کے اختیارات استعمال نہیں کر سکتا، کیونکہ اسکا کام صرف وزیر اعظم کو مشورہ دینا یا اسکی معاونت کرنا ہے لہذا اس طرح کے بلز پارلیمنٹ میں پیش کر کے حکومت توہین عدالت کی مرتکب ہو رہی ہے، ووٹ مانگنا ہر امیدوار کا حق ہے یہ کہیں نہیں لکھا کہ مخالف سے ووٹ نہیں مانگا جا سکتا، انتخابات کی شفافیت کیلئے تمام اسٹیک ہولڈرز کو مل بیٹھ کر اسکا حل نکالنا ہوگا، نیشنل پریس کلب اسلام آباد میں ایک ہنگامی پریس کانفرنس کرتے ہوئے لیگی راہنما اور رکن قومی اسمبلی محسن نواز رانجھا کا کہنا تھا کہ پی ٹی آئی جو خود کو انصاف کا علمبردار سمجھتی ہے وہ غیر آئینی اور غیر قانونی طور پر بلز پارلیمنٹ میں پیش کر رہی ہے اور جتنے بھی بلز پارلیمنٹ میں پیش ہورہے ہیں ان پر وزیراعظم کے مشیر بابراعوان کے دستخط ہیں کیونکہ رولز آف بزنس اس بات کی اجازت نہیں دیتے کہ کوئی مشیر یا معاون خصوصی کوئی بھی بل پارلیمنٹ میں پیش کر سکے بلکہ یہ کام صرف متعلقہ انچارج وزیر ہی کر سکتا ہے۔

محسن نواز رانجھا 

مزید :

صفحہ آخر -