فرقہ واریت کے خاتمے اور مذہبی ہم آہنگی کے فروغ کیلئے، امامیہ کونسل کے نام سے نمائندہ پلیٹ فارم تشکیل 

فرقہ واریت کے خاتمے اور مذہبی ہم آہنگی کے فروغ کیلئے، امامیہ کونسل کے نام سے ...

  

 پشاور(سٹی رپورٹر)پشاور کے اہل تشیع نے عالمی سطح پر رونما ہونے والی تبدیلیوں اور خوفناک فرقہ وارانہ  قتل و غارت گری کی سازشوں کے پیش نظر فرقہ واریت کے خاتمے اور مذہبی ہم آھنگی کے فروغ کے لیے امامیہ کونسل کے نام سے نمائندہ پلیٹ فارم تشکیل دیتے ہوئے دیگر مکاتب فکر کے علماء و اکابرین کے ساتھ مشترکہ جدوجہد کا اعلان کیا ہے۔ یہ اعلان امامیہ کونسل کے صدر اور قومی امن کمیٹی برائے بین المذاھب کے جنرل سیکرٹری سید اظہر علی شاہ (باباگل) نے دیگر اکابرین کے ساتھ پریس کلب پشاور میں ایک مشترکہ پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا، اس موقع پر امامیہ کونسل کے سرپرست اعلی شاہد امداد بیگ سینئر نائب صدر سید عماد الدین نقوی,نائب صدر ذاکر ذوالفقار حسین حیدری, جنرل سیکرٹری حیدر علی، ایڈیشنل جنرل سیکرٹری عرفان علی، سپریم کونسل کے اراکین آغا سید اظہر علی شاہ کاظمی, پروفیسر ملازم حسین،سید ابرار حسین شاہ جعفری،اسد علی نیازی اور دیگر موجود  تھے، مقررین نے کہا کہ امامیہ کونسل کا پلیٹ فارم صوبائی دارالحکومت پشاور میں اتحاد بین المسلمین کے قیام کے لیے مذہبی ہم آھنگی کے فروغ، فرقہ واریت کے خاتمے، مظلوموں کی حمایت اور اہم قومی و ملی امور کی انجام دہی کے لیے معرضِ وجود میں لایا گیا ہے۔ جو اکابرین قوم و ملت کی باہمی مشاورت سے قومی ہم آہنگی کے فروغ میں کردار ادا کرے گا، مقررین نے کہا کہ عالمی طاقتیں شعار اللہ خصوصا'' نبی آخر الزمان حضرت محمد مصطفی ص کے تقدس کے درپے ہیں اس مذموم مقصد کے حصول کے لیئے بھاری فنڈز مختص کرنے کے علاؤہ لوگوں کو گمراہ کرکے برین واش کررہے ہیں اور جدید ٹیکنالوجیز کا استعمال کررہے ہیں، مقررین نے کہا کہ آنے والا وقت عالم اسلام کے لیئے مشکل ترین کھٹن اور تکلیف دہ ہوسکتا ہے جس کا مقابلہ اتحاد ہی کے زریعے ممکن ہے، انہوں نے کہا کہ وقت نے ثابت کردیا ہے کہ فرقہ واریت مسلمانوں کو تباہ کرنے کی ایک عالمی سازش ہے اور اب وقت آگیا ہے کہ فرقہ واریت کے ناسور کے خاتمے کے لیئے تمام مکاتب فکر باہم متحد ہو کر کام کریں اور عالمی سازشوں کو ناکام بنائیں جبکہ ملک و اسلام دشمن قوتیں اب جدید الیکٹرانک ٹیکنالوجی کے ذریعے ہماری سوچ اور ذھنوں کو کنٹرول کرنے کی منصوبہ بندی پر تیزی کے ساتھ کام کر رہیں ہیں، امامیہ کونسل کا یہ نمائندہ پلیٹ فارم مملکت خدادد پاکستان کی حفاظت کے لیے اکابرین قوم و ملت کے ساتھ مل کر عوامی شعور کو بیدار کرنے میں کردار ادا کرے گا اور اتحاد بین المسلیمین اور بین المذاھب ہم آہنگی کے ذریعے ملک و اسلام دشمن عناصر کی ناپاک سازشوں کو ناکام بنائے گا انہوں نے واضح کیا کہ امامیہ کونسل کا قیام اکابرین قوم و ملت کے ساتھ متواتر مشاورت کے بعد عمل میں لایا گیا ہے۔ جس میں تمام قومی سیاسی جماعتوں کے سرکردہ رہنماوں کی مشاورت شامل ہے۔ جنہوں نے مقامی سطح پر مذہبی ہم آہنگی کے فروغ کے لیے امامیہ کونسل کے قیام کو خوش آئند قرار دیتے ہوئے ہر ممکن تعاون کا یقین بھی دلایا ہے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -