منچلوں نے دفعہ 144کو ہوا میں اڑا دیا ، لوگ نہر میں نہاتے رہے ،پولیس خاموش تماشائی بنی رہی

منچلوں نے دفعہ 144کو ہوا میں اڑا دیا ، لوگ نہر میں نہاتے رہے ،پولیس خاموش ...

 لاہور(کرائم سیل) گرمی کی شدت میں اضافہ ، منچلوں نے دفعہ144کو ہوا میں اڑا دیا، لوگ فیملیوں سمیت پکنک منانے کے لئے نہر پر پہنچ گئے ، پولیس خاموش تماشائی بنی رہی ۔تفصیلات کے مطابق نہر میں ڈوبنے کے حادثات کے بعد نہر میں نہانے پر مکمل پابندی عائد کردی گئی تھی اور پولیس کو سختی سے احکامات جاری کئے گئے کہ نہر میں کسی بھی شخص کو نہانے کی اجازت نہ ہے ،اسے گرفتار کرکے مقدمہ درج کیا جائے لیکن گذشتہ روز مسلم ٹاؤن موڑ ،ہربنس پورہ جلو موڑ پر منچلے اور بچے نہر میں نہاتے رہے مقامی پولیس نے بھی انکے خلاف کوئی قانونی کارروائی نہ کی بلکہ بعض جگہوں پر خواتین سے بدتمیزی کی گئی جس کے باعث لڑائی جھگڑے کے واقعات بھی رونما ہوئے ۔موسم گرما کا آغاز ہوتے ہی لاہوریوں نے نہر کا رخ اختیار کرلیا ہے ۔سخت پابندی کے باوجود ہر اتوار کے روز منچلے ٹولیوں کی شکل میں نہر میں نہانے کیلئے پہنچ جاتے ہیں، کسی بھی وقت کوئی بڑا حادثہ ہونے کی توقع ہے ۔ضرورت اس امر کی ہے کہ نہر میں نہانے والوں کے خلاف مثبت حکمت عملی تیار کی جائے تاہم اس سلسلہ میں پولیس کا کہنا ہے کہ بعض جگہوں پر نوجوان نہر میں نہا رہے تھے انکو وارننگ دیکر چھوڑ دیا گیا اگر دوبارہ قانون کی خلاف ورزی کی گئی تونہانے والوں کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔

مزید : علاقائی