سبزیاں اور پھل سرکاری نرخنامے کے مطابق فروخت نہ ہو سکے،شہری پریشان

سبزیاں اور پھل سرکاری نرخنامے کے مطابق فروخت نہ ہو سکے،شہری پریشان

لاہور(کامرس رپورٹر) ضلعی حکومت کے دعوے دھرے کے دھرے رہ گئے۔سبزیوں اور پھلوں کی قیمتیں کم ہوئیں اور نہ ہی مجسٹریٹس شہریوں کو سرکاری نرخنامے کے مطابق سبزیاں و پھل فراہم کر سکے۔۔لاہور کی بیشتر مارکیٹوں میں سبزیوں اور پھلوں کی سرکاری نرخنامے کے مطابق فروخت نہ ہونے پر شہری حکومت سے نالاں دکھائی دیئے۔ مکہ کالونی میں آلو 20، پیاز30 ، ٹماٹر 20، لہسن 200، ادرک 100، پالک 20، بینگن 40، کھیرا 30، کریلے 50، گھیا کدو 40، گھیا توری 60، اروی 100، لیموں 240، مٹر 100، بند گوبھی 30، پھول گوبھی 40، سبز مرچ 50، شملہ مرچ 30، بھنڈی 100، پھلیاں 120، میتھی 40، مولی 30، گاجر 40، چقندر 50 روپے فی کلو میں فروخت کی گئی۔شہریوں کا کہنا ہے کہ ضلعی انتظامیہ کے بھاری تنخواہیں لینے والے ایک سو چار پرائس کنٹرول مجسٹریٹس کسی بھی علاقے میں نظر نہیں آتے جس کے باعث منافع خور مافیا حکومت سے زیادہ طاقتور ہو چکا ہے۔ اْن کا کہنا ہے کہ حکومت دعوے کرنے کی بجائے عملی اقدامات اور قیمتوں کو کنٹرول کرے تاکہ عام صارفین کو ریلیف مل سکے۔ دوسری جانب شہر میں برائلر کا گوشت 235 روپے فی کلو میں فروخت کیا گیا جبکہ فارمی انڈے 70 روپے فی درجن میں فروخت ہوئے۔شہر میں برائلر کی رسد میں بہتری نہ آنے کے باعث قیمت میں کمی نہ ہوسکی ، زندہ برائلر 162 جبکہ مرغی کا گوشت 235 روپے فی کلو میں ہی فروخت کیا گیا۔

مزید : میٹروپولیٹن 1


loading...