بینظیر انکم سپورٹ پروگرام،30لاکھ خواتین ڈیبٹ کارڈ سے محروم،خاندان مالی مشکلات کا شکار

بینظیر انکم سپورٹ پروگرام،30لاکھ خواتین ڈیبٹ کارڈ سے محروم،خاندان مالی ...

ملتان (خاتون رپورٹر) وفاقی حکومت کی طرف سے مستحق اور نادار خواتین کو بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کے تحت امداد دینے کا سلسلہ (بقیہ نمبر12صفحہ12پر )

جاری ہے بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کے تحت50 لاکھ خواتین کی رجسٹریشن کی گئی تھی جن کی نادرا تصدیق بھی کررہی ہے ان میں سے صرف 20لاکھ خواتین کو ڈیبٹ کارڈ فراہم کیے گئے جبکہ باقی خواتین کے پاس پرانے کارڈ ہیں ان کو نئے کارڈ فراہم نہیں کیے گئے جس کے باعث ان خاندانوں کو مشکلات درپیش ہیں۔۱یک لاکھ سے زائد خواتین کو منی آڈر کے ذریعے رقومات نہ مل سکیں ان کو ڈیبٹ کارڈ بنانے کا حکم جاری کردیا جو کہ ایک طویل مرحلہ ہے خواتین کا کہنا ہے کہ ڈیبٹ کارڈنہ ہونے کے باعث ان کو بنک میں پریشانی کا سامنا کرنا پڑتا ہے کیونکہ بنک ان کوپیسوں کی ادائیگی نہیں کرتاانہوں نے حکومت سے اپیل کی ہے کہ جن خواتین کے پاس اس کارڈ کی سہولت موجود نہیں ہے ان کو جلدازجلد ڈیبٹ کارڈفراہم کیے جائیں تاکہ وہ اس سہولت سے مستفید ہوسکیں بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کی اسسٹنٹ ڈائریکٹرسعدیہ فاطمہ نے روزنامہ پاکستان سے گفتگو کرتے ہوئے بتایا کہ جن خواتین کے پاس پرانے کارڈ ہے ان کو نئے کارڈبنانے چاہئیں تاکہ ان کو رقو م مل سکیں۔

انکم سپورٹ

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...