ٹھٹھہ صادق آباد ‘ 18 سالہ ذہنی معذور نے پھندا ڈال کر زندگی کا خاتمہ کر لیا

ٹھٹھہ صادق آباد ‘ 18 سالہ ذہنی معذور نے پھندا ڈال کر زندگی کا خاتمہ کر لیا

ٹھٹھہ صادق آباد ( نمائندہ پاکستان) ٹھٹھہ صادق آباد کے رہائشی 18سالہ (بقیہ نمبر19صفحہ12پر )

ذہنی معذور نوجوان محمد ذیشان ولد منیر احمد مرحوم نے گزشتہ روز خود کو کمر ے میں بند کرتے ہوئے گلے میں پھندا ڈال کر خودکشی کر لی،اہل خانہ کے چیخنے چلانے پر اہل محلہ نے کمرے کی چھت پھاڑ کر دورازہ کھول کر خودکشی کرنے والے ذیشان کی پھندے سے لٹکتی لاش کو اتار کر باہر نکالا،اطلاع ملنے پر ایس ایچ او پولیس موقع پر پہنچ گئی ،لاش کوقبضہ میں لیتے ہوئے پوسٹ مارٹم کے لئے رورل ہیلتھ سنٹر ٹھٹھہ صادق آباد منتقل کردیا،جبکہ ذیشان کی والدہ بہار بی بی،ہمشیرہ سائرہ بی بی نے بتایا کہ ہماری کسی سے کوئی دشمنی نہیں ہے،ذیشان کا ذہنی توازن درست نہ تھا،اس سے قبل بھی وہ خود کوچھریاں مارکر خودکشی کرنے کی کوشش کرچکا تھا۔

مزید : ملتان صفحہ آخر


loading...